لیویز تھانہ پل چوکی کی چابکدستی چوری شدہ موٹر کار 24گھنٹے کے اندر برآمد

لیویز تھانہ پل چوکی کی چابکدستی چوری شدہ موٹر کار 24گھنٹے کے اندر برآمد

بٹ خیلہ (بیورورپورٹ )لیویز تھانہ پل چوکی کی چابکدستی چوری شدہ موٹر کار 24گھنٹے کے اندر برآمد ملا کنڈ لیویز کی سخت ناکہ بندی کے باعث ملزم گاڑی چھوڑ کر فرار ہونے میں کا میاب ایک ملزم رشید خان کے خلاف ایف آئی آر درج ملزم کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارے جارہے ہیں ذرائع کے مطا بق ملزم رشید خان نے گزشتہ روز تمرگرہ سٹینڈ سے موٹر کار نمبر R8446پشاور کو بٹ خیلہ کیلئے بک کرائی جب پل چوکی کے حدود میں پہنچ گئے تو ملزم نے ہو ٹل میں چائے پینے کیلئے ڈرئیوار کو گاڑی روکنے کیلئے کہا تاہم اسی دوران موٹر کار مالک ڈرئیوار سید جان ولد شہزادہ سکنہ انور کلے چارسدہ واش روم چلے گئے تو اسی دوران ملزم رشید خان نے گاڑی چوری کرکے غائب ہو گئے جسکے بعد اطلاع ملتے ہی صوبیدار میجر فرید اللہ خان بھاری نفری کے ہمراہ موقع ہر پہنچ کر پوسٹ کمانڈر سمیع باچہ محرران انور خان سہیل خان سید بہادر اور نورالہادی کو علاقے کے تمام داخلی وخارجی راستوں پر ناکہ بندی کرنے کی ہدایت کردی جبکہ علاقے میں موجود تمام سی سی ٹی وی کیمرے چیک کئے جس سے معلوم ہو گیا کہ گاڑی بٹ خیلہ کی حدود میں ہی موجود ہیں اور لیویز کی جانب سے سخت ناکہ بندی کے باعث ملزم کو گاڑی علاقے سے باہر لے جانا مشکل تھا جسکی وجہ سے ملز م رشید نے گاڑی کو بٹ خیلہ پارک کے قریب چھوڑ کر فرار ہو نے کامیاب ہو گئے ملا کنڈ لیویز کے پوسٹ کمانڈر سمیع باچہ محرر انور خان بمعہ دیگر نفری نے موقع پر پہنچ کر گاڑی کو قبضے میں لیکر بعدازاں موٹر کار مالک کے حوالے کردی دراثناء صوبیدار میجر ملا کنڈ فرید اللہ خان نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ لیویز تھا نہ پل چوکی کی بروقت کاروائی اور ضلع بھر میں ناکہ بندی کے باعث ملزم نے گاڑی مجبورا چھوڑ کر فرار ہوگئے ملا کنڈ لیویز کے جوان محدود وسائل کے باوجود بہترین کارکردگی کا مظا ہرہ کر رہی ہیں جو کہ قابل تحسین ہے علاوہ ازاں متاثرہ موٹر کار ڈرئیوار سید جان نے صوبیدار میجر فرید اللہ خان پوسٹ کمانڈر سمیع باچہ محرران انور خان سہیل خان سید بہادر نورالہادی اور دیگر اہلکاروں کی کارکردگی کو سہراہا اور انکا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ لیویز کی بروقت کاروائی کی وجہ سے میری چوری شدہ موٹر برآمد ہو گئی جس کیلئے میں ملا کنڈ لیویز کا بے حد مشکور ہوں ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر