انسداد منی لانڈرنگ ،خیبرپختونخوا حکومت کا ٹاسک فورس قائم کرنے کا فیصلہ

انسداد منی لانڈرنگ ،خیبرپختونخوا حکومت کا ٹاسک فورس قائم کرنے کا فیصلہ

پشاور(آن لائن)خیبر پختونخوا حکومت نے منی لانڈرنگ کی روک تھام کیلئے ٹاسک فورس قائم کر رہی ہے، بونیر سمیت مالاکنڈ ڈویژن اور جنو بی اضلاع کے بعض اضلاع میں خصوصی نگرانی اس حوالے سے کی جائیگی ،صوبائی حکومت کی منظوری کے بعد ٹاسک فورس کی تشکیل کرنے کا ا علامیہ جاری کردیا جائے گا۔ ٹاسک فورس کا سربراہ ہوم سیکرٹری ہو گا ٹاسک فورس میں ایڈیشنل آئی جی پولیس ، زونل ڈائریکٹر ایف آئی ا ے ، کسٹم کلکٹر ، ایڈیشنل آئی جی سپیشل برانچ ، ڈی آئی جی پولیس آپریشن ، ڈپٹی ڈی جی اے ایس ایف ، فرنٹیئر کور ، فرنٹیئر کانسٹیبلری ، انٹیلی جنس ، سٹیٹ بینک اور حساس اداروں کے نمائندے شامل ہو نگے ،خیبرپختونخوا میں ایف آئی اے نے منی لانڈرنگ کی روک تھام کیلئے اہم اقدامات کئے ہیں اور بے نام درجنوں بینک اکاونٹس کی نشاندہی بھی کر چکی ہے ،ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت کی ہدایات کی روشنی میں ٹا سک فورس انسداد منی لانڈرنگ کیلئے انٹیلی جنس اور معلومات فراہم کرنے کانظام محفوظ بنائیگی تاکہ حوالہ ہنڈی یا کسی اور طریقے سے کرنسی کی سمگلنگ کو روکا اورغیرقانونی کاروبار کرنیوالے افراد اور گینگ کیخلاف بروقت کارروائی کرسکے گی ۔

انسداد منی لانڈرنگ فورس

مزید : صفحہ آخر