ڈہر کی واپڈا عملہ وکلا ء آمنے سامنے لڑائی متعدد افراد زخمی ،پورے شہر کی بجلی بند

ڈہر کی واپڈا عملہ وکلا ء آمنے سامنے لڑائی متعدد افراد زخمی ،پورے شہر کی بجلی ...

ڈہرکی(نامہ نگار)ڈہرکی کے بعد سیپکوواپڈا کے عملہ نے میرپورماتھیلوکے وکلا برادری اورشہریوں کے بھی بلا جواز بجلی کنکشن کاٹ دیئے اس دوران وکلا اورسیپکوعملہ گتھم گتھا دونوں جانب سے لاتوں اورگھونسوں سے حملہ متعد افراد زخمی ۔ وکلا کے احتجاج کے بعد سیپکو عملہ نے بھی پورے شہرکی بجلی بندکرادی(بقیہ نمبر30صفحہ12پر )

اورتھانے پہنچ کر وکلا اورشہریوں کے خلاف مقدمہ درج کرانے کیلئے احتجاج کیا پولیس نے دونوں فریقین کا مقدمہ درج نہ کیا اس سلسلہ میں میرپور ماتھیلوبارکو نسل کے صدر یار محمد اور دیگر وکلا اعجاز پتافی، اویس پتافی،محمد مرادلوند، اوردیگر نے بتایا کہ سیپکوواپڈا کا عملہ شہریوں سے آئے روز زیادتیاں کرتے ہوئے غلط بلنگ زائدریڈنگ ڈال کر بقایاجات کا بہانہ بنا تے ہوئے بجلی کی سپلائی منقطع کردیتے ہیں اورمذاحمت کرنے پرجھگڑا کرکے گھروں میں توڑ پھوڑ کرنے کے بعدالٹا شہریوں پرجھوٹے مقدمات درج کرادیتے ہیں انکی ایسی زیادتیوں کے خلاف ہم نے سیپکو کے ایکسین گھوٹکی سمیت دیگر عملہ نظیرجلبانی،صادق ڈومکی اوردیگر کے خلاف سندھ ہائی کورٹ میں پہلے سے ہی پٹیشن داخل کرارکھی ہے جس کی وجہ سے آج سیپکو والوں نے انتقامی کاروائی کرتے ہوئے ہمارے وکیل اعجاز پتافی اوردیگرکئی شہریوں کی بلا جوازبجلی کے کنکشن کاٹ دیئے ہیں اور ہمارے سمجھانے پر سیپکوعملہ نے ہم پر حملہ کردیا ہے جسکا ہم لوگ مقدمہ درج کرانے تھانے آئے ہیں لیکن پولیس والے ہمارا مقدمہ درج نہیں کرہے ہیں انہوں نے کہا کہ اگرمقدمہ درج نہ کیا گیا تو ہم احتجاج کا دئرہ وسیع کرکے عدلیہ سے بھی رجوع کریں گے آخری اطلاعات کے مطابق وکلا کی درخواست پرتھرڈایڈیشنل سیشن جج میرپورماتھیلو نے 5سیپکو ملازمین کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم جاری کردیا ہے۔دوسری جانب ڈہرکی میں بھی سیپکو ایس ڈی اوعبداللہ کھوسوکی طرف سے خلیل سومروسمیت 10شہریوں پرجھوٹا مقدمہ داخل کرانے پرپی پی کے تعلقہ صدرمیاں رشیداحمد، مسلم لیگ ن ضلع گھوٹکی جنرل سیکر یٹری ذکریا سومرو سومرو اتحاد اوردیگرسیاسی سماجی تنظیموں کی سربراہی میں سینکڑوں شہری سڑکوں پرنکل آئے سخت احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے ایس ڈی او کا پتلہ بھی نذر آتش کیا اور سیپکوانتظامیہ کے خلاف سخت نعرے بازی کرتے ہوئے جھوٹے مقدمہ کو خارج کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

بجلی بند

مزید : ملتان صفحہ آخر