حکومت میں اہلیت، پالیسی اور رویے کا فقدان ہے،دیکھیں گے اب فوجی عدالتوں کی ضرورت ہے بھی یا نہیں،خورشید شاہ

حکومت میں اہلیت، پالیسی اور رویے کا فقدان ہے،دیکھیں گے اب فوجی عدالتوں کی ...
حکومت میں اہلیت، پالیسی اور رویے کا فقدان ہے،دیکھیں گے اب فوجی عدالتوں کی ضرورت ہے بھی یا نہیں،خورشید شاہ

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پیپلزپارٹی کے رہنما اور سینئر سیاستدان خورشید شاہ نے کہا ہے کہ حکومت میں اہلیت، پالیسی اور رویے کا فقدان ہے،دیکھیں گے اب فوجی عدالتوں کی ضرورت ہے بھی یا نہیں۔

پیپلزپارٹی کے رہنما خورشید شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مہنگائی اورعوامی مسائل پرقومی اسمبلی میں احتجاج کریں گے،مڈٹرم الیکشن کے حق میں نہیں ہوں،انہوں نے کہا کہ زرداری صاحب یا ہماری باتوں سے کہاں لگتا کہ کوئی ڈیل ہوئی ہے؟ان ہاؤس تبدیلی کی کیا ضرورت ہے،انہیں کام کرنے دیں۔

پیپلزپارٹی کے رہنما کا کہناتھا کہ آصف زرداری نوازشریف سے تعزیت کیلئے ان کے گھر گئے،جیل میں جا کر ملنے کی روایت موجود نہیں،خورشید شاہ کا کہناتھا کہ نوازشریف کی تباہی کی وجہ پارلیمان کا راستہ بھول کرباہر کا راستہ پکڑنا ہے،انہوں نے کہا کہ بھٹو نے سر نہ جھکایا تو اس کا سر کاٹ دیا گیا،لوگ سلطان راہی کی طرح بڑھکیں پسند کرتے ہیں۔

خورشیدشاہ نے کہا کہ علیمہ خان کی جائیداد کے بارے میں عمران خان کووضاحت دینا ہوگی،نوازشریف بھی منی ٹریل میں ہی پھنسا ہے، یہ بھی دیں،ان کا کہناتھا کہ بلاول اور مرادعلی شاہ کا نام ای سی ایل سے نہ نکال کرحکومت نے سپریم کورٹ کوچیلنج کیا،عمران خان کو جیسے سیٹیں ملیں اس لئے درست کہتا ہے کہ پارلیمنٹ جعلی ہے۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد