ہولی فیملی میں خواتین اور بچوں کیلئے 2 سو بیڈز کا مزید اضافہ کر دیا ،850 سو نئے ملازمین بھی بھرتی کئے جائیں گے :وفاقی وزیر صحت عامر محمود کیانی

ہولی فیملی میں خواتین اور بچوں کیلئے 2 سو بیڈز کا مزید اضافہ کر دیا ،850 سو نئے ...
ہولی فیملی میں خواتین اور بچوں کیلئے 2 سو بیڈز کا مزید اضافہ کر دیا ،850 سو نئے ملازمین بھی بھرتی کئے جائیں گے :وفاقی وزیر صحت عامر محمود کیانی

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر قومی صحت عامر کیانی نے کہا ہے کہ وزیراعظم کی ہدایت پر مختلف ہسپتالوں کا دورے کرنا شروع کئے ہیں جس کا مقصد صحت کی بنیادی سہولیات عوام تک پہنچانا ہے،پاکستان میں کسی بھی حکومت نے صحت کے شعبے پر توجہ نہیں دی، ہم نے اس جانب خصوصی توجہ دی ہے، جنوری کے آخر میں دو کروڑ ہیلتھ کارڈ جاری کئے جائیں گے ،ہیلتھ کارڈ کا پیکج دوگنا کر دیا ہے، تمام بڑی بیماریوں کا علاج ہیلتھ کارڈ کی مدد سے پرائیویٹ اور سرکاری ہسپتالوں سے علاج کرایا جا سکے گا،ہولی فیملی ہسپتال میں خواتین اور بچوں کیلئے 2 سو بیڈز کا مزید اضافہ کر دیا گیا ہے،اسلام آباد میں تین نئے ہسپتال اور نرسنگ یونیورسٹی بنا رہے ہیں،راولپنڈی کے ہسپتالوں کو سٹیٹ آف دی آرٹ بنائیں گے ،ڈالر کی قیمت کم ہونے سے ادویات کی قیمتوں میں بھی کمی ہو گی ۔

ہولی فیملی ہسپتال راولپنڈی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے وفاقی وزیر صحت عامر محمود کیانی کا کہنا تھا کہ ہیلتھ انشورنس کارڈز کا ٹینڈر ایشو کیا جا چکا ہے، فروری کے وسط تک تقریباً پونے 2 کروڑ ہیلتھ کارڈ ایشو کیے جائیں گے جن سے عام  آدمی 7 لاکھ 20 ہزار تک کا علاج کسی بھی پرائیویٹ یا سرکاری ہسپتال سے مفت کروا سکیں گے جبکہ اگلے مرحلوں میں ’’یونیورسل کوریج‘‘ کا ٹارگٹ حاصل کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کے پچھلے دورے پر ہولی فیملی ہسپتال میں ایک بیڈ پر دودو خواتین مریض پڑی ہوئی تھیں جس پر وزیراعظم نے فوری طور پر اس مسئلہ کو حل کرنے کا حکم دیا تھا،  ہولی فیملی ہسپتال میں ایک سال میں30 لاکھ مریضوں کا علاج کیا جاتا ہے اور ان کے ساتھ ایک کروڑ دوسرے افراد دیکھ بھال کیلئے آتے ہیں ،ہسپتالوں میں ادویات کی بلا تعطل فراہمی کیلئے پنجاب حکومت سے کہہ دیا ہے توقع ہے کہ یہ معاملہ بھی جلد حل کر لیا جائے گا  ۔ انہوں نے کہاکہ شعبہ گائنی اور اطفا ل میں سو بیڈ کا اضافہ کر دیا گیا ہے ،ہولی فیملی میں نئی اور جدید مشینری فراہم کی جا رہی ہیں ،50 انکوبیٹرز،60 بی بی کارٹ اور 10  بی بی وارمر فراہم کئے جا رہے ہیں، صفائی کے نظام کے بہتر بنانے کیلئے مزید 180 نئے ملازمین کا اضافہ کیا ہے،10 وارڈز کی مرمت تیزی سے جاری ہے اور یہ کام سات روز میں مکمل کر لیا جائے گا ۔ انہوں نے کہاکہ ہولی فیملی میں 100 واش رومز کی مرمت کے ساتھ ساتھ  نئی ٹائلیں لگائی جا رہی ہیں ، 850نئی بھرتیاں کی جائیں گی، اس حوالے سے سمری وزیراعلٰی پنجاب کو بھیج دی گئی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ تین روز میں ہولی فیملی میں شیلٹر ہوم تیار ہو جائے گاجس سے غریب لوگ فائدہ اٹھا سکیں گے اور انہیں یہاں دو وقت کا کھانا مفت فراہم کیا جائے گا ، ہسپتال میں نیا فرنیچر دیا جا رہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت وزیراعظم کی ہدایت پر صحت کے شعبہ میں خصوصی توجہ دے رہی ہے ،وزیراعظم کی ہدایت پر میں ہولی فیملی کا چار مرتبہ دورہ کر چکا ہوں اور خود مانیٹرنگ کر رہا ہوں ،حالات مزید بہتری کی جانب جائیں گے ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ زیادہ تر ادویات برآمد کی جاتی ہیں ڈالر کی قیمت میں کمی ہوئی  تو ادویات کی قیمتوں میں دوبارہ کمی کریں گے، فارما سوٹیکل کمپنیاں 30فیصد اضافے کا مطالبہ کر رہی تھیں لیکن ہم نے ان کو 9 سے 15 فیصد پر منا لیا،ہم عوام اور میڈیا کے سامنے جوابدہ ہیں،ایک ہفتے میں آپ کو ہسپتالوں کی حالت میں مزید بہتری نظر آئے گی ۔

مزید : قومی