سعودیہ ، امارات اور چائنہ سے پیسے حکومت نہیں جنرل باجوہ لیکر آئے :سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر کا دعویٰ

سعودیہ ، امارات اور چائنہ سے پیسے حکومت نہیں جنرل باجوہ لیکر آئے :سینیٹر ...
سعودیہ ، امارات اور چائنہ سے پیسے حکومت نہیں جنرل باجوہ لیکر آئے :سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر کا دعویٰ

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پیپلز پارٹی کے سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر نے کہا ہے کہ سعودی عرب ، یو اے ای اورچائنہ سے جو پیسے آئے ہیں یہ حکومت نے نہیں لئے بلکہ یہ جنرل باجوہ صاحب لیکر آئے ہیں کیونکہ ہماری فوج کے ان تینو ں ممالک کے ساتھ سٹریٹیجک تعلقات ہیں، حکومت نے اپنے ذمہ جو کام تھے ، وہ پورے نہیں کئے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”جرگہ“ میں گفتگو کرتے ہوئے مصطفی نواز کھوکھر نے کہا کہ حکومت نے ادویات کی قیمتوں میں اضافہ جان بوجھ کر کیا ، مہنگائی عروج پر ہے ، گھر بنانے کی بجائے گرائے جارہے ہیں۔ انہوںنے کہا کہ دوست ممالک سے قرضہ لینا حکومت کی کامیابی نہیں ہے ، سعودی عرب ، یو اے ای اورچائنہ سے جو پیسے آئے ہیں یہ حکومت نے نہیں لئے بلکہ یہ جنرل باجوہ صاحب لیکر آئے ہیںکیونکہ ہماری فوج کے ان تینو ںممالک کے ساتھ سٹریٹیجک تعلقات ہیں، حکومت نے اپنے ذمہ جو کام تھے ، وہ پورے نہیں کئے ۔

انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے بہت سے رہنماﺅں نے بھی رزاق داﺅد کے بیٹے کو ٹھیکہ دیئے جانے کامعاملے کادفاع نہیںکیا ، اگر زراق داﺅد کے وزیر بننے سے ان کی کمپنی کے شیئرز کی قیمت میں اضافہ ہوا ہے تو اس پر شکوک وشبہارت پیدا ہوتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے جے آئی ٹی کی رپورٹ کی دھجیاں اڑا دی ہیں، جہاں تک مقدمات کا تعلق ہے ، یہ ہم پہلے ہی بھگتتے آئے ہیں اور ان کاجواب عدالت میں دیں گے ۔ ان کاکہنا تھا کہ ن لیگ اپنے رویے کے بعد ریلیف کی کیاامید کررہی تھی ؟

مزید : قومی