تاجربرادی کے 80 فیصد مسائل حل ہوچکے‘ ظاہر شاہ

  تاجربرادی کے 80 فیصد مسائل حل ہوچکے‘ ظاہر شاہ

  



رستم(امین اللہ سے)تنظیم تاجران خیبر پختونخوا کے جنرل سیکرٹری اور مرکزی تنظیم تاجران مردان کے صدر ظاہر شاہ نے کہا کہ تنظیم کے مسلسل کاوشوں کی بدولت تاجربرادی کے 80 فیصد مسائل حل ہوچکے ہیں جبکہ 20فیصد مسائل زیر التواء ہے، شناختی کارڈ سے متعلق پالیسی پر غور کیا جارہا ہے، ایف بی آر میں ایسے لوگ موجود ہیں جو بزنس کمیونٹی کے تاجروں کی عزت نفس مجروح کرنے، ان کے اعتماد کو ٹھیس پہنچانے اور ایف بی آر اور تاجروں کے مابین ریلیشن شپ خراب کر نے پر تلے ہیں جس کی وجہ سے ٹیکس ریشو کم ہورہی ہے، حالانکہ سب سے زیادہ ٹیکس تاجربرادری ہی جمع کرتی ہے، اخبارات میں ضلع مردان میں تاجربرادری کے خلاف پروپیگنڈہ کیا جارہا ہے کہ وہ ٹیکس پیڈ نہیں کرتے ان کے خلاف کاروائی کی جائے گی اس میں کوئی حقیقت نہیں تاجر تنظیم میں وہ لوگ شامل ہیں جو باقاعدگی سے ٹیکس پیڈ کررہے ہیں اور ان کے پاس این ٹی این سرٹیفیکیٹس موجود ہیں۔وہ رستم پریس کلب تحصیل رستم میں میٹ دی پریس سے خطاب کررہے تھے اس موقع پر تنظیم تاجران پار اڈہ رستم اور خکلاء مارکیٹ کے صدر سید منیر خان بھی ان کے ہمراہ تھے، ان کا کہنا تھا کہ ایک طرف ہم انتظامیہ اور حکومت کے ساتھ ملکر تاجربرادری کو ٹیکس کے زمرے میں لانے کیلئے مشترکہ مہم چلارہے ہیں جبکہ دوسری جانب ایف بی آر کے اہلکار تاجروں پر من گھڑت الزمات لگا رہے ہیں، چیئرمین ایف بی آر ایسے اہلکاروں کے خلاف فی الفور کاروائی کریں جو بے جا تاجروں پر الزامات لگارہے ہیں، تاجر برادری کے حقوق اور زیر التواء مسائل کے حل کے سلسلے میں عنقریب منسٹری آف کامرس سے ملاقات کیا جائے گا جس کیلئے حکمت عملی وضع کرلی گئی ہے میٹ دی پریس کے بعدصوبائی جنرل سیکرٹری تنظیم تاجران ظاہر شاہ رستم بازار کے دکانداروں سے ملے اور ان کے مسائل دریافت کئے۔۔۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...