مدارس اصلاحات مغعبی ایجنڈا ہے، تکمیل نہیں ہونے دینگے: قاری حنیف جالندھری

مدارس اصلاحات مغعبی ایجنڈا ہے، تکمیل نہیں ہونے دینگے: قاری حنیف جالندھری

  



پشاور (سٹی رپورٹر)مدارس اصلاحات مغربی ایجنڈا ہے۔ مغر بی ایجنڈے کی تکمیل نہیں ہونے دیں گے۔ مدارس کی آزادی اور خود مختاری پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے۔تفصیلات کے مطابق وفاق المدارس کے زیر انتظام جامعہ امداد العلوم مسجد درویش صدر میں تقریب تقسیم انعامات کا انعقاد کیا گیا۔ جس میں ان طلبہ و طالبات کو انعامات اور شیلڈوں سے نوازا گیا جنہوں نے گزشتہ پانچ سالوں میں ملکی یا صوبائی سطح پر نمایاں پوزیشنیں حاصل کی تھیں۔ تقریب میں وفاق المدارس کے سینئر مرکزی نائب صدر مولانا انوار الحق، وفاق المدارس کے ناظم اعلی مولانا قاری محمد حنیف جالندھری، رکن مجلس عاملہ مولانا ڈاکٹر عادل خان مہتمم جامعہ فاروقیہ کراچی، وفاق المدارس صوبہ پنجاب کے ناظم مولانا قاضی عبد الرشید، وفاق المدارس صوبہ بلوچستان کے ناظم و ایم این اے مولانا صلاح الدین، وفاق المدارس صوبہ سندھ کے ناظم مفتی امداد اللہ، مفتی غلام الرحمن مہتمم جامعہ عثمانیہ پشاور، حافظ محمد داود فقیر مہتمم جامعہ امداد العلوم پشاور کے علاوہ صوبہ بھر کے مدارس کے مہتممین اور ناظمین نے شرکت کی۔ تقریب سے وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے ناظم اعلی مولانا قاری محمد حنیف جالندھری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اصلاحات کے نام پر مدارس پر کوئی حرف نہیں آنے دیں گے۔ مدرسہ ہر حال میں آزاد اور خود مختار رہے گا۔ مدارس کی آزادی اور خودمختاری میں کسی قسم کا کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔ مدارس میں امن و امان اور سلامتی کی تعلیم دی جاتی ہے۔ دینی مدارس کے خلاف کوئی سازش کی گئی تو ڈٹ کر مقابلہ کریں گے۔ رجسٹریشن میں مدارس نہیں، بلکہ حکومت خود رکاوٹ ہے۔ حکومت مدارس کے ساتھ کیے گئے معاہدوں کی پاسداری کریں۔ اگر حکومت نے سنجیدی کا مظاہرہ نہیں کیا تو ہم جلد اپنے لائحہ عمل کا اعلان کریں گے۔ دینی مدارس میں ملک سے وفاداری اور محبت کی تعلیم دی جاتی ہے۔ لہذا پروپیگنڈا بند کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ مدارس میں ملک و ملت کے خیر خواہ تیار ہوتے ہیں۔ مدارس پوری قوم کی ضرورت ہے۔ مدارس ملک کی سب سے بڑی این جی اوز کی حیثیت رکھتے ہیں، جہاں تیس لاکھ طلبہ و طالبات کو مفت تعلیم کے ساتھ ساتھ رہائش کی سہولت دی جاتی ہیں۔ حکومت طے شدہ معاہدوں کو نہ چھیڑیں۔ مدارس کی آزادی اور خود مختاری یک نکاتی ایجنڈا ہے جس پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔ رجسٹریشن کے لیے یک طرفہ فارم کسی بھی صورت قبول نہیں ہوگا۔ وفاق المدارس کے سینئیر مرکزی نائب صدر مولانا انوار الحق نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مدارس کو آزادانہ خدمات کا موقع دیا جائے۔ مغربی قوتیں ہماری آزادی تہذیب چھیننا چاہتی ہے۔ مغرب زدہ طبقہ بلا جواز پروپیگنڈے کررہا ہے۔ مدارس نے ہر وقت میں ملک و ملت کی تعمیری خدمات انجام دی ہیں۔ مدارس میں ملک و ملت کے خیر خواہ تیار ہوتے ہیں۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مولانا ڈاکٹر عادل کان سے کہا کہ حکومت مدارس کے ساتھ مذاکرات کے حوالے سے سنجیدہ نہیں۔ حکومت کے ساتھ مذاکرات کامیاب ہوسکتے ہیں بشرطیکہ حکومت سنجیدگی کا مظاہرہ کریں۔ مدارس کو حب الوطنی کی سرٹیفیکیٹ کی کوئی ضرورت نہیں۔مدارس حب الوطنی اور وفاداری میں کسی سے بھی کم نہیں۔ تقریب سے مفتی غلام الرحمن کے علاوہ چاروں صوبوں کے ناظمین نے بھی خطاب کیا۔ 

مزید : پشاورصفحہ آخر