اشرافیہ کرپشن انکشافات کوانتقامی کارروائیاں کہہ کر خودکو نہیں چھپاسکتی ،وزیراعظم 

اشرافیہ کرپشن انکشافات کوانتقامی کارروائیاں کہہ کر خودکو نہیں چھپاسکتی ...
اشرافیہ کرپشن انکشافات کوانتقامی کارروائیاں کہہ کر خودکو نہیں چھپاسکتی ،وزیراعظم 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان کاکہناہے کہ پاناما پیپرز نے اشرافیہ کی منی لانڈرنگ اور کرپشن بے نقاب کی ،اب براڈشیٹ ایک بار پھر اسی اشرافیہ کی کرپشن سامنے لائی ہے ،اشرافیہ انکشافات کوانتقامی کارروائیاں کہہ کر خودکو نہیں چھپاسکتی ۔

وزیراعظم عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ٹوئٹ میں کہاہے کہ یہ تمام انکشافات وہی ہیں جن کیلئے میں 24 سال سے لڑرہا ہوں۔وزیراعظم کاکہناہے کہ کرپشن کوپاکستان کی ترقی میں سب سے بڑا خطرہ سمجھتا ہوں،لوٹ مار کرنے کیلئے اشرافیہ حکومت میں آتی ہے، اشرافیہ کرپشن کی کمائی باہر بھیجنے کیلئے منی لانڈرنگ کرتے ہیں،اشرافیہ پیسے باہر بھیج کرسمجھتی ہے پاکستانی قوانین سے بچ جائیگی ۔

انہوں نے کہاکہ سیاسی روابط سے یہ این آر او لیتے ہیں تاکہ کرپشن کی رقم بچی رہے ،ساری صورتحال سے پاکستان کے عوام کو سب سے زیادہ نقصان ہوتا ہے،ایک طرف عوم کاپیسہ ان کی لوٹ مارکی نذر ہو جاتا ہے ۔

وزیراعظم نے کہاکہ پھرلوٹ مار کا پیسہ واپس لانے میں ٹیکس دہندگان کا پیسہ لگتا ہے،این آر او دینے سے یہ سارے پیسے ضائع ہو جاتے ہیں ،کرپشن کے یہ تمام انکشافات ابھی صرف آغاز ہیں ،براڈشیٹ سے اشرافیہ کی منی لانڈرنگ سے متعلق شفافیت چاہتے ہیں ،جاننا چاہتے ہیں براڈشیٹ کو مزید تحقیقات سے کس نے روکا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -اسلام آباد -