آسٹریا میں لاک ڈاﺅن 21 فروری تک بڑھنے کے امکانات روشن 

آسٹریا میں لاک ڈاﺅن 21 فروری تک بڑھنے کے امکانات روشن 
آسٹریا میں لاک ڈاﺅن 21 فروری تک بڑھنے کے امکانات روشن 

  

ویانا(المیر باجوہ)آسٹریا میں اسکول سمسٹر کے اختتام تک بند اور 21 فروری تک لاک ڈاون بڑھنے کے امکانات روشن ہو گئے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق وزیر تعلیم ہینز فامین اور وزیراعظم سبسٹین کرز آخر تک یہ ایک سخت جدوجہد میں ہیں کہ بدھ کے روز وفاقی حکومت اعلان کرے گی کہ سکول 18 جنوری کو کھلیں۔ مگر حالات سکول کھولنے کے لئے سازگار نہیں۔

 لیکن اب سمسٹر کے اختتام تک اسکول بند رہنے کے زیادہ چانسز ہیں۔ اگرچہ وزیر تعلیم نے ہفتے کے روز اعلان کیا تھا کہ ہفتہ وار ناک ٹیسٹوں کے ذریعہ سکول ممکن حد تک محفوظ طریقے سے کھلنا چاہئے لیکن اب یہ نشانیاں ہوم اسکولنگ میں توسیع کی طرف اشارہ کرتی ہیں۔ اور یہ اس حقیقت کے باوجود کہ ہر روز نئے انفیکشن کی تعداد مستحکم ہے۔ منگل کے روز1575 نئے مثبت نتائج برآمد ہوئے۔ 

ایک نیا ماہر مطالعہ فاصلاتی تعلیم میں طلبا کے مابین انجام دینے میں بڑھتی ہوئی مایوسی اور دباو¿ کو بھی ظاہر کرتا ہے۔مقامی میڈیا نے اب حکومتی حلقوں کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا ہے کہ کورونا اتپریورتن B117 کے تیزی سے پھیلاو¿ نے وزیراعظم کو خطرے کی گھنٹی موڈ میں ڈال دیا ہے۔ منگل کے روز میڈیا سے بھی تصدیق ہوگئی تھی کہ یہاں تک کہ ایف ایف پی 2 ماسک بھی برطانیہ میں اس کے خلاف خاطر خواہ تحفظ نہیں رکھتے تھے کلاسوں میں بچوں میں وائرس تیزی سے پھیل گیا۔

وزیراعظم نے اس سے انکار کیا کہ فیصلہ ہوچکا ہے انہوں نے کہا کہ بدھ کو اس کا اعلان کرنا ہے۔ پردے کے پیچھے ماہرین کے ساتھ ابھی بھی متعدد مشورے جاری ہیں۔ ہم کوئی خطرہ مول لینا نہیں چاہتے ہیں اور سکولوں کو بند کردیں گے - شاید 21 فروری تک جب بالائی آسٹریا اور نیدر آسٹریا میں سمسٹر کا وقفہ ختم ہوگا وزارت تعلیم نے بھی میڈیا کو بتایا کہ ہفتے کے وسط تک سب کچھ واضح ہوجائے گا۔

مزید :

بین الاقوامی -