پیپلزپارٹی اورن لیگ میں کوئی فرق نہیں،دونوں ذاتی تحفظ چاہتے ہیں،شہزاداکبر

پیپلزپارٹی اورن لیگ میں کوئی فرق نہیں،دونوں ذاتی تحفظ چاہتے ہیں،شہزاداکبر
پیپلزپارٹی اورن لیگ میں کوئی فرق نہیں،دونوں ذاتی تحفظ چاہتے ہیں،شہزاداکبر

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)شہزاداکبرکاکہناہے کہ پیپلزپارٹی اورن لیگ میں کوئی فرق نہیں،دونوں نے لوٹ مارکی،ایف اے ٹی ایف کے معاملے پراپوزیشن نے عوام کیلئے کوئی ریلیف نہیں مانگا، یہ لوگ اپنا ذاتی تحفظ چاہتے ہیں۔

مشیر داخلہ و احتساب شہزاد اکبرنے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ پانامہ پیپرز نے اشرافیا کو بے نقاب کیا،اسی سیاسی اشرافیہ نے اپنی دفاع کےلئے غلط بیانی سے کام لیا،وزیراعظم عمرا ن خان نے آج اشرافیہ سے متعلق بیان بھی دیا ،سیاسی اشرافیہ نے سیاسی اثررسوخ کواپنا دفاع کیلئے استعمال کیا۔

انہوں نے کہاکہ وہ بحث الگ ہے کہ براڈشیٹ نے نیب کومعاونت کی یا نہیں،براڈشیٹ کے ذریعے بھی سیاسی اشرافیہ بے نقاب ہوئی،بیس سال پہلے معاہدے کے تحت 200 افراد کی فہرست بنائی گئی تھی،ن لیگ والے کہہ رہے تھے ہماری کسی سے کوئی ڈیل نہیں ہوئی ،ن لیگ کے حوالے سے سعد حریری کا بیان سب کے سامنے ہے۔

مشیر داخلہ و احتساب نے کہاکہ جب بھی ڈیل یا این آر او ہوا فائدہ پیپلزپارٹی اورن لیگ کوملا،شریف خاندان نے پہلی ڈیل پرویز مشرف کے ساتھ کی اورباہرچلے گئے،جن سے آپ نے این آراو لیا ان کیلئے ریڈ کارپٹ بھی بچھایا،آپ نے حکومت سے کبھی ملکی مفاد کیلئے کوئی بات نہیں کی، جب بھی آپ نے بات کی وہ اپنے مقدمات ختم کرنے کا استدعا ہوتی۔

شہزاداکبر نے کہاکہ پیپلزپارٹی کانظریہ صرف لوٹ مارکا ہے،پیپلزپارٹی اورن لیگ میں کوئی فرق نہیں،دونوں نے لوٹ مارکی،ایف اے ٹی ایف کے معاملے پراپوزیشن نے عوام کیلئے کوئی ریلیف نہیں مانگا،میں مذاکرات کا حصہ رہا ہوں،اپوزیشن نے صرف نیب قوانین کوختم کرنے کی بات کی،حیرت یہ ہے کہ یہ لوگ اپنا ذاتی تحفظ چاہتے ہیں،قومی مفا د کی بات کرتے ہی نہیں۔مشیر داخلہ واحتساب نے کہاکہ براڈ شیٹ کو2000میں انگیج کیاگیا،مریم اورنگزیب بتائیں 2016میں اٹارنی جنرل کون تھا۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -