ناسا،نیو ہورائزن پروب نے پلوٹو کی تصاویر بھیجنا شروع کردیں

ناسا،نیو ہورائزن پروب نے پلوٹو کی تصاویر بھیجنا شروع کردیں

واشنگٹن(آئی این پی )امریکی خلائی تحقیق کاروں نے کہاہے کہ ’نیو ہورائزن پروب‘ نے تصاوریر بھیجنا شروع کردی ہیں، جوں جوں وہ مرحلہ وار پلوٹو کے قریب آتا جا رہا ہے۔ تحقیق کاروں نے اْسے ’حیران کْن‘ اور ’مزیدار‘ تجربہ قرار دیا ہے۔پلوٹو نظام شمسی کا سب سے چھوٹا اور بعید ترین سیارہ ہے۔پروب کی خلائی گاڑی منگل کو پلوٹو کے قریب ترین سے گزرے گی، جب وہ اْس کی سطح سے تقریباً 12500 کلومیٹرکے فاصلے پر ہوگی۔تاہم، ’نیو ہیرائزن‘ کی اب تک کی کارکردگی پر سائنس دانوں میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے

، جسے اْنھوں نے پلوٹو کے سیارے کا ایک بالکل ہی مختلف منظر بتایا ہے۔

مزید : عالمی منظر