دنیا کے دوسرے ذہین ترین آدمی نے ذہانت کا راز بتا دیا

دنیا کے دوسرے ذہین ترین آدمی نے ذہانت کا راز بتا دیا
 دنیا کے دوسرے ذہین ترین آدمی نے ذہانت کا راز بتا دیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاس اینجلس ( نیوز ڈیسک ) ذہانت و فطانت قدرت کی عظیم عنایت ہے جو کسی کو کم اور کسی کو زیادہ ودیعت کی جاتی ہے مگر دنیا کے دوسرے ذہین ترین امریکی شخص کا کہنا ہے کہ وہ اپنی حیرت انگیز ذہانت کے تحفظ کے لیے روزانہ مختلف قسم کی 38 گولیاں کھاتا ہے تاکہ ہمیشہ ذہین ترین افراد میں شمار ہوسکے۔54سالہ رک روزنر کا آئی کیو لیول 192 ہے جبکہ دنیا میں صرف ایک اور صاحب ہیں جن کا آئی کیو 192 سے زیادہ ہے جو کہ ایک یونانی ڈاکٹر ہیں۔حیرت کی بات یہ ہے کہ رک اربوں انسانوں سے زیادہ ذہین ہونے کے باوجود بے روزگار ہیں۔وہ کہتے ہیں کہ ذہانت اور عملی زندگی میں کامیابی کا تعلق اتنا گہرا نہیں ہے جتنا عام طور پر سمجھا جاتا ہے۔وہ نائٹ کلب کے باہر گارڈ کے فرائض سرانجام دینے کے علاوہ ٹی وی کے لیے بھی کام کر چکے ہیں لیکن آج کل بے روزگار ہیں اور زیادہ تر وقت اپنی ذہانت کو محفوظ کرنے کی فکر میں لگے رہتے ہیں۔وہ جو گولیاں استعمال کرتے ہیں ان میں اومیگا تھری مچھلی کے تیل کی گولیاں ، ایسپرین ، کیلشیم کی گولیاں ، ذیابیطس سے بچنے کے لیے گولیاں ، وٹامن کے ، کافی کی گولیاں ، اور غذائی سپلیمنٹ بھی شامل ہیں۔وہ روزانہ تقریباً اڑھائی گھنٹے تک سخت ورزشیں بھی کرتے ہیں۔اپنی بے پناہ ذہانت کے باوجود ناکارہ ہونے کے متعلق وہ ایک کتاب "Dumbass Genius" بھی لکھ رہے ہیں۔

مزید : صفحہ آخر