لاہور میں منشیات اور اسلحہ،بارود کی سمگلنگ میں ٹرک اڈے ملوث ہیں: رپورٹ

لاہور میں منشیات اور اسلحہ،بارود کی سمگلنگ میں ٹرک اڈے ملوث ہیں: رپورٹ
لاہور میں منشیات اور اسلحہ،بارود کی سمگلنگ میں ٹرک اڈے ملوث ہیں: رپورٹ

  

لاہور (ویب ڈیسک) خفیہ اداروں نے ایک بار پھر خبردار کیا ہے کہ بادامی باغ کے 15 مربع کلومیٹر کے علاقہ میں پھیلے ہوئے ٹرک اڈے منشیات کی سمگلنگ اور اسلحہ سمیت بارود کی منتقلی میں اہم کردار ادا کررہے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ صوبائی دارالحکومت میں ہونے والی دہشتگردی کی اکثر وارداتیں سٹی ڈویژن میں ہوئی ہیں۔

اخباری رپورٹ کے مطابق ان ذرائع نے بتایا کہ علاقہ غیر اور بلوچستان سے فرار ہونے والے دہشتگردوں سمیت جرائم پیشہ عناصر ان ٹرک اڈوں کے ذریعے ہی آتے جاتے ہیں اور ان علاقوں سے آنے والے ٹرکوں میں ہی سفر کرتے ہیں تاہم قانون نافذ کرنے والے اداروں نے آج تک ان ٹرک اڈوں کے ذریعے آنے والے جرائم پیشہ عناصر کے خلاف نہ تو کوئی کارروائی کی ہے اور نہ ہی انہیں چیک کرنے کیلئے کوئی سسٹم بنایا ہے۔ سٹی ڈویژن میں پولیس کی سرپرستی میں چلنے والے قحبہ خانے بھی ان جرائم پیسہ عناصر کی آماجگاہ ہیں اور ان قحبہ خانوں میں ریلوے سٹیشن، لاری اڈہ، لکشمی چوک اور تھانہ ٹبی سٹی کے علاقوں میں قاءم ہوٹلز اور گیسٹ ہاﺅس بھی خصوصی اہمیت کے حامل اور جرائم کے گڑھ ہیں۔

بسیںدھماکہ خیز مواد، اسلحہ اور منشیات کی سمگلنگ بھی بادامی باغ، لاری اڈہ اور ریلوے سٹیشن سے ہوکر گزرتی ہے اور بادامی باغ میں قائم ٹرکوں کے اڈے کو منشیات اور دھماکہ خیز مواد کی سملنگ کیلئے استعمال کیا جاتا ہے۔ تھانہ ٹبی سٹی کے علاقہ میں قائم جرائم پیشہ عناصر کی آماجگاہ درجنوں گھروں میں قائم کوٹھی خانوں کے خلاف پولیس کارروائی کرنے سے گریزاں ہے۔ اکثر قحبہ خانوں کے خلاف کارروائی سے پہلے وہاں سے منتھلی لینے والے پولیس اہلکار انہیں چھاپے کی اطلاع دے دیتے ہیں جس کی وجہ سے ان قحبہ خانوں میں چھپے جرائم یشہ عناصر کے خلاف پولیس کی کارروائیاں رائیگاں جاتی ہیں۔

مزید : لاہور