اقلیتی رکن اسمبلی شہزادمنشی کیخلاف 5کروڑ روپے ہرجانے کا دعویٰ دائر

اقلیتی رکن اسمبلی شہزادمنشی کیخلاف 5کروڑ روپے ہرجانے کا دعویٰ دائر

لاہور(نامہ نگار)مسلم لیگ (ن) کے اقلیتی ایم پی اے شہزادمنشی کے خلاف 5کروڑہرجانے کا دعویٰ دائرکردیا گیا،شہری جاوید مائیکل نے جھوٹے مقدمے میں پھنسانے پرسول کورٹ میں دعویٰ دائر کیاہے۔ کیس کی سماعت کے دوران مسیحی برادری کی بڑی تعداد عدالت کے باہر احتجاج کرتی رہی ۔سینئرسول جج امجد علی باجوہ کی عدالت میں مارٹن جاوید مائیکل نے اقلیتی ایم پی اے شہزاد منشی کے خلاف 5کروڑ روپے ہرجانے کا دعویٰ کیاگیا ہے ،بشیر ایڈووکیٹ کی وساطت سے دائر کئے گئے دعویٰ میں موقف اختیار کیا گیاہے کہ ایم پی اے شہزاد منشی شادباغ بند روڈ کے متحدہ مسیح قبرستان کی جگہ پر قبضہ کر کے پلازہ تعمیر کرانا چاہتا تھا جس پر اہل علاقہ نے احتجاج کیا۔شہزاد منشی نے جاوید مائیکل کے خلاف دھمکیاں دینے کا جھوٹا مقدمہ درج کروادیا جس کی تفتیش ہوئی اور وہ بے گناہ ثابت ہو گیا،جھوٹامقدمہ درج کروانے اور ذہنی اذیت میں مبتلا کرنے پر 5کروڑ روپے ہرجانہ دلوایا جائے۔عدالت نے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد کیس کو متعلقہ سول جج کی عدالت میں بھجوادیا۔

مزید : صفحہ آخر


loading...