31جولائی کو اپوزیشن قیادت سے مشترکہ لائحہ عمل کیلئے مشاورت ہو گی ، طاہر القادری

31جولائی کو اپوزیشن قیادت سے مشترکہ لائحہ عمل کیلئے مشاورت ہو گی ، طاہر ...

 لاہور(خبر نگار خصوصی) پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر محمد طاہر القادری نے مرکزی سیکرٹریٹ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شریف برادران پاکستان کی سا لمیت اور بقا کیلئے خطرہ ہیں دونوں ملکوں کے درمیان دشمنی جبکہ نواز شریف اور مودی کے درمیان دوستی ہے ۔ آئندہ کے لائحہ عمل کی تیاری کیلئے 31جولائی کو ساری اپوزیشن قیادت سے سانحہ ماڈل ٹاؤن،پانامہ لیکس اور آئندہ کے مشترکہ لائحہ عمل کی تیاری کیلئے قومی مشاورت ہو گی ۔موجودہ حکمران مدت پوری نہیں کریں گے ۔متحدہ اپوزیشن کے 19 جولائی کے اجلاس میں ہمارا 3رکنی وفد سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈا پور کی قیادت میں شریک ہو گا ۔ٹی او آرز کمیٹی کا اگلا اجلاس انشا اللہ 31جولائی کو عوامی تحریک کے مرکزی سیکرٹریٹ میں ہو گا ۔خورشید شاہ ،شیخ رشید ،سراج الحق،شاہ محمود قریشی اور راجہ ناصر عباس سے بات ہو چکی دیگر سے رابطے کر رہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ آج کی یہ تقریب عبد الستار ایدھی کے نام ہے ،عبد الستار ایدھی پاکستان کا فخر تھے دعا ہے کہ انکے عظیم رفاہی منصوبے قیامت تک جاری و ساری رہیں ۔انہوں نے 31 جولائی کے قومی مشاورتی اجلاس کے ایجنڈے پر تفصیل کے ساتھ روشنی ڈالتے ہوئے کہاکہ تمام اپوزیشن قیادت 31 جولائی کو لاہور میں جمع ہو گی جس کے میزبان ہم ہونگے اور آئندہ کے مشترکہ لائحہ عمل کی تیاری کیلئے غوروخوض ہو گا ۔انہوں نے کہاکہ موجودہ حکمران جتنی جلد رخصت ہونگے ملک اور قوم کا اتنا ہی فائدہ ہے ۔کرپشن اور دہشتگردی کے یہ بانی ہیں ،پانامہ لیکس کرپشن کے سمندر کا ایک قطرہ ہے شفاف احتساب کے حوالے سے پارلیمانی اپوزیشن کے ٹی او آرز اور مطالبات کے پوری طرح ساتھ ہیں اس کا نتیجہ ضرور نکلے گا ۔انہوں نے کہاکہ میں تین چار روز کیلئے یوکے جا رہا ہوں ،لندن پلان کی خبریں مخالفین اڑا رہے ہیں میں لندن جا ہی نہیں رہا تو لندن پلان کہاں سے آ گیا ؟ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ آرمی چیف کے حوالے سے چلنے والی تشہیری اور تصویری مہم کے پیچھے حکمرانوں کے ناپاک عزائم کارفرما نظر آتے ہیں، لگ رہا ہے کہ یہ بدنام کرنے کی مہم ہے ۔یہ تصویریں بہت عرصہ پہلے سے چل رہی ہیں لیکن ایک دم تشہیر میں اضافے کے پیچھے حکومتی ہاتھ دکھائی دیتا ہے ،عمران خان کی شادی سے متعلق پوچھے گئے سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ ایک اور ایک گیارہ ہوتے ہیں ،انہوں نے مزید کہاکہ حکومت نزع کی حالت میں ہے ، نزع کی حالت میں رہنے والے مریض کو اس حالت میں جتنا وقت لگے گا اتنی اذیت ہو گی ،ہمیشہ ہمیشہ کیلئے انکے اقتدار کا خاتمہ دیکھ رہا ہوں۔

طاہرالقادری ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...