عوامی مینڈیٹ پر شب خون نہیں مارنے دینگے : حکومت ، انشاء اللہ وزیر اعظم استعفٰی نہیں دینگے : مریم نواز

عوامی مینڈیٹ پر شب خون نہیں مارنے دینگے : حکومت ، انشاء اللہ وزیر اعظم ...

اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک 228 ایجنسیاں) وفاقی کابینہ کا اجلاس آج طلب کر لیا گیا ہے اور جے آئی ٹی رپورٹ پر بریفنگ دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ وزیر اعظم نے پارٹی رہنماؤں سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ تحقیقاتی ٹیم سے تعاون نہ کرنے کا الزام بے بنیاد ہے ۔ اہم اجلاس کے شرکا نے اس عزم کا اظہار کیا کہ کسی کو مینڈیٹ پر شب خون مارنے نہیں دیں گے۔وزیر اعظم نواز شریف نے کہا کہ حکومت نے ملک کو ترقی کے راستے پر ڈال دیا ہے، آئندہ انتخابات سے پہلے توانائی بحران پر بھی قابو پا لیا جائے گا، جے آئی ٹی رپورٹ میں موجود تضادات کو عدالت عظمیٰ کے سامنے لایا جائے گا۔اجلاس کے شرکا نے کہا کہ وزیر اعظم ملک کے مقبول ترین لیڈر ہیں، عوام نے انہیں پانچ برس کے لئے منتخب کیا، کسی کو عوامی مینڈیٹ پر شب خون مارنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔وزیر اعظم کی زیر صدارت تیسرے رو ز بھی مشاورتی اجلاس ہو۔وزیراعظم نوازشریف نے جے آئی ٹی رپورٹ پر سپریم کورٹ میں قانونی جنگ بھرپور طریقے سے لڑنے کیلئے عاصمہ جہانگیر، مصطفیٰ رمدے اور دیگر اہم قانون دانوں سے رابطے کرکے نئی قانونی ٹیم تشکیل دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔ وزیراعظم محمد نوازشریف نے سپریم کورٹ میں جے آئی ٹی رپورٹ پیش ہونے کے بعد مسلسل قانونی وئینی اور وفاقی وزراء سے چوتھے مشاورتی اجلاس کی صدارت کی جس میں بیرسٹر ظفراللہ،اٹارنی جنرل اشتر اوصاف ،وفاقی وزرا،اسحاق ڈار،خواجہ آصف،سعد رفیق،شاہد خاقان عباسی،مریم اورنگزیب اور مریم نواز سمیت دیگر نے شرکت کی۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سپریم کورٹ میں جے آئی ٹی کی رپورٹ پر اپنے دفاع میں بھرپور طریقے سے قانونی جنگ لڑی جائے گی اس حوالے سے نئی قانونی ٹیم تشکیل بھی دی جائے گی۔شریف خاندان نے نیب کیسز کا سامنا کرنے کیلئے ملک کے4 بڑے قانون دانوں کی خدمات حاصل کرلی ہیں۔نجی ٹی وی نے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ جے آئی ٹی رپورٹ میں شریف خاندان کے نیب میں موجود 28 کیسز کی فہرست شامل ہے، جے آئی ٹی رپورٹ کے مطابق شریف خاندان کے2 کیسز ایس ای سی پی اور 2 ایف آئی اے کے پاس ہیں، جس کے باعث شریف خاندان نے 4 معروف وکلا کی خدمات حاصل کرلی ہیں جن میں خواجہ حارث امجد پرویز سمیت دیگر 2 وکلا شامل ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ خواجہ حارث شریف خاندان کی قانونی ٹیم کی سربراہی کریں گے مجد پرویز نیب کیسزکے ماہر تصورکیے جاتے ہیں۔ امجد پرویز این آئی سی ایل کیس میں مونس الہٰی کے وکیل بھی رہے ہیں۔ وکلا کی ٹیم جے آئی ٹی رپورٹ کا جائزہ لے رہی ہے اور ہفتے کے اختتام تک سپریم کورٹ کیلئے جواب تیارکرلے گی۔وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز نے کہا ہے کہا ہے کہ انشا ء اللہ استعفیٰ نہیں دیں گے، نواز شریف پر ایک پیسے کی خورد برد بھی ثابت نہیں ہوئی۔ اپنے ٹویٹر پیغام میں استفسار کیا ہے کہ کیا استعفیٰ اس لئے دیں کہ نواز شریف کے پانچوں ادوار میں ان کیخلاف ایک بھی سرکاری پیسے کی خورد برد ثابت نہیں ہو سکی؟جے آئی ٹی کی رپورٹ سامنے آنے کے بعد ان دنوں وزیر اعظم اور مسلم لیگ ن کو اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اور وزیر اعظم پر دن بدن مستعفی ہونے کیلئے دباؤ بڑھتا جا رہا ہے۔ مریم نواز کا یہ بیان اسی تناظر میں سامنے آیا ہے۔

نواز شریف اجلاس

مزید : صفحہ اول


loading...