کشمیر میں عالمی اداروں کی بھارتی مظالم پر خاموشی ناانصافی کی انتہا ہے: دفاع پاکستان کونسل

کشمیر میں عالمی اداروں کی بھارتی مظالم پر خاموشی ناانصافی کی انتہا ہے: دفاع ...

  

لاہور ( این این آئی) دفاع پاکستان کونسل کے مرکزی رہنماؤں نے کہاہے کشمیر میں جاری قتل و غارت گری میں مودی سرکار کو اسلام دشمن قوتوں کی مکمل سرپرستی حاصل ہے ،نہتے کشمیریوں کیخلاف کیمیائی ہتھیار وں کا استعمال کر کے ظلم و بربریت کی انتہا کر دی گئی ہے، کشمیری مظاہرین کیخلاف ظلم و تشدد کیلئے نت نئے حربے اختیا رکئے جارہے ہیں، 13جولائی یوم شہدائے کشمیر تحریک آزادی کے حوالہ سے انتہائی اہمیت رکھتا ہے ،بھارتی ریاستی دہشت گردی کے مذمو م ہتھکنڈے کشمیریوں کے جذبہ حریت کو سرد نہیں کر سکتے ، 16جولائی کو اسلام آباد اور 19جولائی کو لاہور میں ہونیوالی شہدائے کشمیر کانفرنسوں کی تیاریاں بھرپور انداز میں جاری ہیں، قومی ،مذہبی، سیاسی و کشمیری قیادت کو شرکت کی دعوت دی جارہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار چیئرمین دفاع پاکستان کونسل مولانا سمیع الحق، پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی، سردار عتیق احمد ، لیاقت بلوچ، اجمل خان وزیر، علامہ ابتسام الہٰی ظہیر، مولانا امیر حمزہ، قاری محمد یعقوب شیخ، حافظ عبدالغفارروپڑی اور سید ضیاء اللہ شاہ بخاری نے اپنے مشترکہ بیان میں کیا۔ان رہنماؤں کا مزید کہنا تھا کہ تحریک آزادی کشمیر میں دن بدن تیزی آرہی ہے، بدترین ظلم و بربریت اور قتل و غارت گری سے کشمیر پر غاصبانہ قبضہ برقرار رکھناممکن نہیں،کشمیری قیادت و عوام پر عزم ہیں، قربانیاں و شہادتیں رائیگاں نہیں جائیں گی، جدوجہد آزادی کشمیر جلد نتیجہ خیز ہو گی،استحکام پاکستان اور نظریاتی سرحدوں کے تحفظ کیلئے ہر پاکستانی کو اپنا کردار ادا کرنا ہو گا۔ کشمیری آج یک زبان ہوکر آزادی کے نعرے لگارہے ہیں لیکن افسوس پاکستان میں کشمیریوں کی سب سے مضبوط وبلند آواز حافظ محمد سعید کو بیرونی

دباؤپر نظر بندکر دیا گیا ہے،عالمی اداروں کی بھارتی مظالم پر خاموشی ناانصافی اور ظالم کی حمایت کی انتہاء ہے ۔بھارتی سکیورٹی ادارے چادراور چاردیواری کا تقدس پامال کرنے سمیت کشمیریوں کی منظم نسل کشی کر رہے ہیں ،لیکن کسی کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی۔ حافظ محمد سعید نے سال17ء کشمیر کے نام کیا ، ملک بھر میں اس حوالے سے پروگرام جاری ہیں۔ ہم کشمیری بھائیوں کیساتھ ہیں، جہاں انکا خون گرے گاوہاں ہمارا خون گرے گا ۔کشمیر کا حصول پاکستان کے لئے ز ندگی اور موت کا مسئلہ ہے، کشمیر کے بغیر پاکستان نامکمل ہے اور یہ پاکستان کی شہ رگ ہے۔بھارت سے دوستی والے رویہ نے مسئلہ کشمیر کو بہت نقصان پہنچایا ہے، حکمران تحریک آزادی کشمیر کی مدد کرنے میں سنجیدہ نہیں ہیں،قائداعظم کی کشمیر پالیسی کو ترک کر دیا گیا ہے ور حکمران تحریک آزادی کشمیر کو دہشت گردی سمجھتے ہیں۔ کشمیریوں سے اصل یکجہتی ان کے خون سے خون ملانااور ان کی مددکرنا ہے۔ کشمیر میں ریاستی دہشت گردی کا مسئلہ تمام بین الاقوامی فورمز پر اٹھانے کی ضرورت ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -