خیبرپختونخوا اسمبلی کی پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس

خیبرپختونخوا اسمبلی کی پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس

  

پشاور( سٹاف رپورٹر )خیبر پختو نخوا کی پبلک اکا ؤ نٹس کمیٹی (پی اے سی) نے محکمہ آڈٹ اور محکمہ ایکسا ئز اینڈ ٹیکسیشن کو حکم دیا ہے کہ وہ اپنی مشتر کہ کمیٹی کے ذریعے محکمہ ایکسا ئز کی جا نب سے پکڑی گئی 182گا ڑیو ں کی مو جودہ پو زیشن معلو م کر کے کمیٹی کو رپو رٹ پیش کر یں تاکہ ان گا ڑیو ں کی عدم نیلا می اور غیر مجاز افراد کو مبینہ الا ٹمنٹ کے با رے میں حقا ئق معلو م کئے جا سکیں ۔محکمہ آڈٹ نے ما لی سا ل 2013-14کی آڈٹ رپو رٹ میں ان گا ڑیو ں کی عدم نیلا می کے با عث محکمہ ایکسا ئز کو قو می خزا نے کو12کروڑ ر40لا کھ 90ہزار رو پے نقصا ن پہنچا نے کا ذمہ دا ر قرار دیا ہے.یہ حکم بد ھ کے روز خیبر پختو نخوا ہا ؤ س ایبٹ آباد میں جا ری پی اے سی کے اجلاس میں تیسرے دور میں دیا گیا۔اجلاس سپیکر صو با ئی اسمبلی و چےئر پر سن پی اے سی ڈا کٹر مہر تا ج رو غا نی کی صدا رت میں منعقد کیا گیا جس میں کمیٹی کے اراکین ،آڈٹ حکا م اور صو با ئی اسمبلی و متعلقہ محکمو ں کے افسرا ن نے شر کت کی اجلاس کے دورا ن انجئیر نگ یو نیورسٹی پشا ور اور محکمہ ایکسا ئزاینڈ ٹیکسیشن کے خلا ف مختلف اخرا جا ت پر آڈٹ کے اعترا ضا ت نمٹا ئے گئے۔کمیٹی نے محکمہ ایکسا ئز کی فرا ہم کردہ ضبط شدہ گا ڑیو ں کی فہرست میں ظا ہر کی گئی182میں سے14گا ڑیو ں کی وئر ہا ؤ س میں مبینہ عد م مو جو دگی اور اس کے با عث قو می خزا نے کو ہو نے وا لے ایک کروڑ 82لا کھ رو پے کے نقصا ن سے متعلق آڈٹ پیرے پرغور اور تفصیلی بحث کے بعد یہ معا ملہ بھی مشتر کہ کمیٹی کے سپرد کر دیا۔محکمہ آڈٹ نے محکمہ ایکسا ئز کی مبینہ بے قا عد گیوں کی نشا ندہی ما لی سا ل 2011-12کے آڈٹ کے دورا ن کی تھی۔سپیکر اور چےئر پر سن پی اے سی نے اجلاس میں اس امر پر تشویش کا اظہا ر کیا کہ محکمو ں کی ما لی بے قا عدگیو ں کی نشا ندھی کے باو جود انہیں سا لہا سا ل تک در ست نہیں کیا جا تا جس سے نہ صر ف ان معا ملا ت میں مزید پیچیدگیا ں پیدا ہو تی ہیں بلکہ کمیٹی پر بھی مزید بو جھ بڑھتا ہے ۔انہو ں نے افسوس ظا ہر کیا کہ سر کا ری محکمے بیشتر وقت پرا نی رپو رٹو ں کا پو سٹ ما ر ٹم کر نے میں گزار دیتے ہیں جس سے اصل مسلے کا حل التوا کا شکا ر رہتا ہے ۔ڈا کٹر مہر تا ج رو غا نی نے انجےئر نگ یو نیو رسٹی پشا ور کے خلا ف آڈٹ اعترا ضا ت کا فیصلہ کر تے ہو ئے یو نیو رسٹی کے سپو رٹس جمنا زیم کے منصو بے کی تعمیر میں تا خیر کے با عث قو می خزا نے کو ہو نے وا لے 39لا کھ 44ہزار رو پے کی ریکو ری اور اس کے ذمہ دا ر افراد کے تعین کے لئے محکما نہ تحقیقا ت کا بھی حکم دیااور تما م محکمو ں کو ہدا یت کی کہ وہ پی اے سی میں آنے سے قبل ڈیپا ر ٹمنٹ اکا ؤ نٹس کمیٹی کا اجلاس سیکر یٹری اسمبلی کی مو جو دگی میں ضرو ر منعقد کریں اور پی اے سی کو تما م ضرو ری دستا ویزا ت اجلاس میں کم از کم 15روز قبل ہر صو رت میں فرا ہم کر یں ۔سپیکر نے محکمہ آڈٹ کی جا نب سے محکمو ں کے فرا ہم کر دہ دستا ویزی شوا ہدکی تصدیق میں تا خیر کا نو ٹس لیتے ہو ئے ڈا ئیر یکٹر جنر ل آڈٹ کو ہدا یت کی کہ وہ محکمو ں کی دستا ویزا ت کی تصدیق کے لئے اپنی ایک الگ ٹیم مقرر کر یں کیو نکہ بیشترآڈٹ اعترا ضا ت دستا ویزا ت کی عد م تصدیق سے پیدا ہو رہے ہیں۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -