پاناما کیس کو جلد منطقی انجام تک پہنچانا ہوگا ‘ میاں مقصود احمد

پاناما کیس کو جلد منطقی انجام تک پہنچانا ہوگا ‘ میاں مقصود احمد

  

ملتان (سٹی رپورٹر) امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے کہاہے کہ پاناما لیکس کے فیصلے کا انتظارکیاجانا چاہئے محض جے آئی ٹی کی رپورٹ پر حکمران خاندان کاواویلا اس بات کا ثبوت ہے کہ منی لانڈرنگ کی گئی ہے۔مائنس ون فارمولا اور اس قسم کی دوسری باتیں جمہوریت کو نقصان پہنچانے(بقیہ نمبر31صفحہ12پر )

کی منظم سازش ہے اس سے سسٹم ڈی ریل ہوسکتا ہے۔سپریم کورٹ کو احتساب اور آئین وقانون کے تقاضے پورے کرتے ہوئے جلد پانا ما لیکس کیس کو منطقی انجام تک پہنچانا ہوگا۔ایک سوچی سمجھی ساز ش کے تحت سیاسی عدم استحکام پیداکیا جارہا ہے۔پاناماکیس کے حوالے سے20کروڑعوام کی نگاہیں سپریم کورٹ پر مرکوزہوچکی ہیں۔انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی کی کاوشوں سے پاکستان میں احتساب شروع ہوچکا ہے۔نظریہ ضرورت کو دفن کرتے ہوئے ملک وقوم کے مفاد میں کرپٹ اور بدعوان افراد کے خلاف بغیر کسی دباؤ کے کارروائی کرنی ہوگی۔جب تک پاکستان میں کرپشن کے ناسور کو جڑسے اکھاڑ پھینکا نہیں جاتا نہ ملک ترقی کرسکتا ہے اور نہ ہی عوام کی زندگیوں میں خوشحالی کا دور آسکتا ہے۔محب وطن قیادت کا فقدان ہمارا سب سے بڑاقومی مسئلہ بن چکا ہے۔انہوں نے کہاکہ عوام کے اصل مسائل سے توجہ ہٹانے کے لیے غیر ضروری ایشوز کو ہائی پروفائل کیاجارہا ہے۔حکمران اپنی مدت کے چار سال مکمل کر چکے ہیں مگر عوام کو درپیش مشکلات میں کسی قسم کی کوئی کمی واقع نہیں ہوئی۔کرپٹ اور فرسودہ نظام سے نجات کا وقت آچکا ہے۔انہوں نے کہاکہ حکومت کی جانب سے سپریم کورٹ پردباؤ بڑھانے کے لیے منظم طور پر کوشش کی جارہی ہے۔تمام اپوزیشن جماعتوں اور20کروڑ عوام الناس کامطالبہ ہے کہ غیر جانبدارانہ احتساب کے لیے نوازشریف اپنے عہدے سے مستعفی ہوکر قانونی کارروائی کاسامنا کریں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -