بیلٹ باکس ، پلاسٹک سیل ، مہریں تھیلے اور سٹیشنری تما اضلاع میں پہنچا دیں : الیکشن کمیشن

بیلٹ باکس ، پلاسٹک سیل ، مہریں تھیلے اور سٹیشنری تما اضلاع میں پہنچا دیں : ...

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)الیکشن کمیشن نے کہا ہے کہ الیکشن کا کنٹرول الیکشن کمیشن کے پاس ہے، فوج آئین کے مطابق صرف سیکیورٹی ڈیوٹی دے رہی ہے ، الیکشن شفاف ہوگا ، کوئی انگلی نہیں اٹھا سکے گا،پشاور واقعہ سے ثابت ہوگیا امن وامان کا مسئلہ معمولی نہیں ، الیکشن آزادانہ، منصفانہ اور شفاف بنانے کیلئے ہر ادارے کی مدد لیں گے ،20 جولائی تک بیلٹ پیپر کی چھپائی کا کام مکمل کر لیں گے ،ملک بھر میں مانیٹرنگ ٹیمیں سرگرم عمل ہیں ،پہلی مرتبہ موثر مانیٹرنگ سسٹم کام کررہاہے،ووٹر کو پرامن ماحول فراہم کرنے کیلئے مسلح افواج کو پولنگ سٹیشن کے اندر اور باہر تعینات کی جائیگا، 85 ہزار پولنگ سٹیشنوں پر فوجی تعینات ہونگے، 18 ہزار پولنگ سٹیشنوں پر کیمرے لگائے جائینگے،پولنگ سٹیشنوں میں موبائل فون لے جانے پر مکمل پابندی ہوگی،اس بار مقناطیسی سیاہی کی جگہ عام پیڈ والی سیاہی استعمال ہوگی ،سیکیورٹی فورسز کسی بھی صورت میں نتائج کی ترسیل نہیں کریں گی ،پولنگ سٹیشنوں پر تمام اختیارات پریزائڈنگ آفیسرز کے ہیں، انہیں ہی مجسٹریٹ کے اختیارات حاصل ہونگے،امید ہے کہ اس بار پچھلی مرتبہ سے ٹرن آؤٹ آئے گا،تمام امیدواروں کو سیکیورٹی فراہم کرنے کیلئے ہدایات جاری کر دی ہیں،انتخابات میں مدد کے حوالے سے فیس بک کی جانب سے لکھی جانیوالی چٹھی کا جائزہ لے رہے ہیں ،پولنگ کاوقت بڑھانا احسن عمل ،کسی بھی جگہ اگر مزید وقت بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا تو تین گھنٹے پہلے آگاہ کرنا ہوگا، سینیٹرز کی الیکشن مہم میں شرکت پر پابندی ہے اس حوالے سے ضابطہ اخلاق واضح ہے۔ جمعرات کو پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سیکرٹری الیکشن کمیشن بابر یعقوب فتح محمد نے پشاور واقعہ پر اظہار افسوس کرتے ہوئے کہا کہ اس واقعہ سے ثابت ہوگیا ہے کہ امن وامان کا مسئلہ معمولی نہیں ہے، ہم نے انشاء اللہ الیکشن 25 جولائی کو کروانا ہے اور آئین کے مطابق ہر ادارے کی مدد لیں گے تاکہ آزادانہ، منصفانہ اور شفاف انتخابات کو یقینی بنایا جاسکے، انتخابی عملے کی تربیت کا عمل آخری مرحلے میں ہے۔بیلٹ باکس، پلاسٹک سیل، مہریں ، تھیلے، سٹیشنری اور دیگر سامان تمام اضلاع میں پہنچا دیا گیا ہے ۔ بیلٹ پیپر بھی 22 جولائی تک پہنچ جائینگے اور فوج کی نگرانی میں 24 جولائی تک تمام سامان پولنگ سٹیشنوں تک پہنچ جائے گا۔ہمیں امید ہے کہ 25 جولائی سے پہلے عدالتوں سے فیصلے آجائینگے، ان میں پنجاب سے 22، سندھ سے 81 اور بلوچستان کے پانچ حلقے شامل ہیں۔ پنجاب کے چار اضلاع میں بیلٹ پیپر دے چکے ہیں ۔ خیبرپختونخوا کے سارے بیلٹ پیپر پرنٹ ہو چکے ہیں، ان کی ترسیل (آج) جمعہ سے شروع ہو جائیگی۔ بلوچستان کے بیلٹ پیپر کراچی میں چھپ رہے ہیں اور وہ بذریعہ ہوائی جہاز فوج کی نگرانی میں پہنچائے جائینگے۔نادرا نے خواتین کو بطور ووٹر رجسٹرڈ کرنے کیلئے الیکشن کمیشن کے ساتھ مل کر بہت کام کیا لیکن اس کے باوجود بھی ایک کروڑ خواتین بطور ووٹر رجسٹرڈ نہیں ہوسکیں اب خود کار طریقہ کار سے مستقبل میں رجسٹریشن ہو جائے گی۔ جیپ کا نشان مخصوص امیدواروں کو الاٹ کرنے سے متعلق انہوں نے کہا کہ ہوسکتا ہے کہ جیپ کے علاوہ ٹرک کا نشان بھی 120 لوگوں کو الاٹ ہوا ہو اس پر آپ نے ابھی تک ریسرچ نہیں کی یہ ریٹرننگ افسر اور امیدوار کا معاملہ ہے کہ امیدوار کونسا نشان لینا چاہتا ہے۔

الیکشن کمیشن

اسلا م آباد(ایجنسیاں) الیکشن کمیشن پاکستان ( ای سی پی ) نے عام انتخابات میں فرائض انجام دینے والے انتخابی عملے، پریذائڈنگ افسروں کی مراعات میں اضافہ کردیا۔ پریذائیڈئنگ افسران اپنے موبائل سے انتخابی نتائج کی تصاویر بھیج کر ایک ہزار ہزار روپے حاصل کرسکیں گے، اس طرح صرف ایک کلک پر 85 ہزار پریذائڈنگ افسران میں 8 کروڑ 50 لاکھ روپے تقسیم کیے جائیں گے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق پریذائڈنگ افسران کو اعزازیہ اور دیگر سہولیات کے علاوہ ایک ہزار روپے ملیں گے۔اس کے علاوہ الیکشن کمیشن کی جانب سے پریذائڈنگ افسران کا اعزازیہ بھی بڑھایا گیا ہے اور اسے 3200 سے بڑھا کر 6 ہزار روپے کردیا گیا ہے۔اعزازیے کی رقم بڑھانے سے الیکشن کمیشن کو 23 کروڑ 88 لاکھ روپے کا اضافی بوجھ برداشت کرنا پڑے گا۔ دریں اثناء الیکشن کمیشن آف پاکستان میں انتخابی نتائج جاری کرنے سے متعلق ملک بھر کے ریٹرنگ افسران کو ہدایت نامہ ارسال کردیا ہے الیکشن کمیشن میں تمام آروز کو مراسلے بجھواتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ پریذائیڈنگ افسران ووٹوں کی گنتی کی بعد فوری طور پر فارم 45تیار کریں گے جس میں امیدواروں کو پڑنے والے ووٹوں کی تفصیلات درج ہوگی اور بچ جانے والے بیلٹ پیپر کی تفصیلات فارم 46میں درج کی جائیں گی ووٹوں کی گنتی مکمل ہونے پر نتائج کی تصدیق شدہ کاپی امیدواروں کو موقع پر جاری کرنے کی ہدایت کی گئی ہے اور نتائج کی کاپی وہاں موجود پولنگ ایجنٹ کو بھی دی جاسکتی ہے ہدایت نامہ میں مزید کہا گیا کہ نتائج کی تیاری کے بعد پرزائیڈنگ افسیر تمام انتخابی مواد پیکٹ میں بند کرکے آرو کو بھیجنے کا پابند ہوگا اور نتائج کی تیاری کیلئے پرزائیڈنگ افیسر امیدواروں اور ان کے ایجنٹ کو تحریری نوٹس جاری کرکے مقام اور وقت کا تعین کرے گا اور پریذائیڈنگ افیسر کوسٹل بیلٹ کی تفصیلات بھی شامل کرے گا اور افسران کو بھیجے گئے نتائج امیدواروں اور ان کے ایجنٹس کی موجودگی میں جمع کرائے جائیں گے اور یہ عمل پولنگ دن کے خاتمے کے بعد بلاتاخیر شروع کیا جائیگا الیکشن کمیشن نے اپنے ہدایت نامے میں یہ بھی کہا ہے کہ آروز نتائج کی تیاری سے قبل گنتی سے بچ جانے والے بیلٹ پیپر کا جائزہ لے کر متلعق حکام کو بتانے کے بھی پابند ہوگے ۔مزید برآں الیکشن کمیشن نے اختیارات کے ناجائز استعمال سے متعلق درخواست پر ڈی آئی جی اسٹیبلشمنٹ پنجاب بابر بخت قریشی کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 17جولائی کو طلب کر لیا۔جمعرات کو الیکشن کمیشن میں ڈی آئی جی اسٹیبلشمنٹ پنجاب بابر بخت قریشی کے خلاف اختیارات کے ناجائز استعمال سے متعلق درخواست کی سماعت ممبر سندھ عبدالغفار سومرو کی سربراہی میں تین رکنی کمیشن نے کی۔دریں اثناء الیکشن کمیشن آف پاکستان نے فیس بک کی خدمات لینے سے انکار کرتے ہوئے فیس بک انتظامیہ کی جانب سے کی گئی پیشکش کو مسترد کردیا ہے ، الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ یہ ایک حساس معاملہ یہ جو کہ الیکشن کے نتائج پر بری طرح اثر انداز ہوسکتا ہے اس لئے ہم سوشل میڈیا پر بھروسا نہیں کرسکتے۔ فیس بک انتظامیہ کی جانب سے الیکشن کمیشن کا آفیشل پیج بنانے کی آفر کی گئی تھی جس پر الیکشن کمیشن نے انکار کرتے ہوئے اس آفر کو مسترد کردیا۔

الیکشن کمیشن

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...