پی پی 106 سے سیف اللہ نااہل، پی بی 11 سے شیر خان نیازی کے کاغذات مسترد

پی پی 106 سے سیف اللہ نااہل، پی بی 11 سے شیر خان نیازی کے کاغذات مسترد

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) سپریم کورٹ نے پی پی 106 سے آزاد امیدوار سیف اللہ انتخابی کو انتخابات کے لئے نااہل قراردے دیا، جبکہ حلقہ پی بی 11 سے آزاد امیدوار شیر خان نیازی کے کاغذات مسترد کر دیئے، این اے 189 ڈی جی خان سے میر بادشاہ قیصرانی کو الیکشن لڑنے کی اجازت دیدی۔تفصیلا ت کے مطابق سپریم کورٹ نے پی پی 106 سے آزاد امیدوار سیف اللہ انتخابی کو انتخابات کے لئے نااہل قراردے دیا چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے عمر غلط ظاہر کرنے پر نااہلی کا فیصلہ برقرار رکھا۔چیف جسٹس نے کہاکہ غلط عمر ظاہر کرنا بھی بدنیتی اور غلط بیانی ہے، سیف اللہ نے ہائی کورٹ فیصلے کیخلاف اپیل کی تھی جو عدالت نے مسترد کردی160۔ جبکہ سپریم کورٹ نے حلقہ پی بی 11 سے آزاد امیدوار شیر خان نیازی کے کاغزات مسترد کر دیئے ، چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی تو جسٹس اعجازالاحسن نے کہاکہ آپ کا موقف ہے کہ ڈاکٹر کی رپورٹ پر فیصلہ کیا جائے۔نادرا کی دستاویذات کو کیسے ایک طرف رکھ دیں۔عمر کے تنازعہ پر کاغذات مسترد کیے گئے۔علاوہ ازیں سپریم کورٹ نے ن لیگ کے میر بادشاہ قیصرانی کو الیکشن لڑنے کی اجازت دیدی،چیف جسٹس کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی تو درخواست گزار کے وکیل کا کہنا تھا کہ میر بادشاہ قیصرانی کو جعلی ڈگری پر سزا سنائی گئی، جسٹس اعجاز الاحسن نے کہاکہ سزا کیخلاف ہائی کورٹ میں اپیل کی گئی تھی، ہائی کورٹ نے اپیل میں سزا معطل کر دی ہے، سزا معطل ہو جائے تو امیدوار الیکشن لڑ سکتا ہے، اپیل خارج ہونے پر الیکشن ٹربیونل سے رجوع کیا جا سکتا ہے،یاد رہے کہ میر بادشاہ قیصرانی این اے 189 ڈی جی خان سے ن لیگ کے امیدوار ہیں۔

کاغذات مسترد

مزید : علاقائی