پشاور خودکش حملے کے مزید دو زخمی دم توڑ گئے، تعداد 22 ہوگئی

پشاور خودکش حملے کے مزید دو زخمی دم توڑ گئے، تعداد 22 ہوگئی

پشاور(این این آئی)عوامی نیشنل پارٹی کی انتخابی مہم کے دوران ہونے والے خودکش حملے کے 2 زخمی دم توڑ گئے جس کے بعد جاں بحق ہونیوالوں کی تعداد 22 ہوگئی۔لیڈی ریڈنگ ہانتظامیہ کے مطابق یکہ توت دھماکے میں زخمی ہونے والا شخص محمد عادل دوران علاج چل بسا ، 7 زخمی اب بھی زیرعلاج ہیں۔اسی طرح خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں بھی ایک زخمی دم توڑ گیا جہاں دو زخمیوں کو اب بھی امداد دی جارہی ہے، خیبرٹیچنگ ہسپتال انتظامیہ کے مطابق دھماکے کے 12 زخمیوں کو علاج کے بعد فارغ کیا جاچکا ہے۔ دوسری جانب بیرسٹر ہارون بلور کی شہادت پر خیبرپختونخوا بار کونسل کی کال پر تین روزہ سوگ اور ہڑتال رہی جس کے پیش نظر صوبے بھر میں وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے ۔یاد رہے کہ 10 جولائی کو پشاور کے علاقے یکہ توت میں عوامی نیشنل پارٹی کی کارنر میٹنگ کے دوران خودکش حملے میں ہارون بلور سمیت 20 افراد جاں بحق اور درجنوں زخمی ہوگئے تھے ٗخود کش حملے کا مقدمہ تھانہ سی ٹی ڈی کے ایس ایچ او آغا میر جانی شاہ واجد علی کی مدعیت میں درج کیا گیا جس میں انسداد دہشت گردی ایکٹ کی دفعات بھی شامل کی گئی ہیں ٗسی سی پی او پشاور قاضی جمیل نے ڈی آئی جی سی ٹی ڈی کی سربراہی میں تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دے دی ہے جو 7 روز میں اپنی رپورٹ پیش کرے گی۔

پشاوردھماکہ

مزید : علاقائی