27 سال بعد فائنل کھیلنے والی انگلش ٹیم ٹرافی کیلئے فیورٹ

27 سال بعد فائنل کھیلنے والی انگلش ٹیم ٹرافی کیلئے فیورٹ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لندن(افضل افتخار) آئی سی سی کرکٹ ورلڈکپ کافائنل میزبان انگلینڈ اورنیوزی لینڈکی کرکٹ ٹیموں کے مابین 14جولائی کولارڈزکرکٹ گراؤنڈلندن میں کھیلاجائے گا۔27 سال بعد ورلڈکپ فائنل کھیلنے والی انگلش ٹیم ٹرافی اٹھانے کیلئے فیورٹ ہے واضح رہے کہ 1992کے فائنل میں پاکستان نے انگلینڈ کو شکست دے کر ورلڈ کپ کا ٹائٹل جیتا تھا۔ انگلینڈ اور نیوزی لینڈ نے اس سے قبل کبھی ورلڈ کپ نہیں جیتا، ہوم گراونڈ پر انگلینڈ تاریخ میں پہلی بار ورلڈ کپ جیتنے کے لیے فیورٹ ہے۔انگلینڈ نے چوتھی بار اور نیوزی لینڈ نے مسلسل دوسرا فائنل کھیلنے کا اعزاز حاصل کیا ہے۔دونوں ٹیموں کے کپتان اپنی اپنی فتح کے دعوے کررہے ہیں لیکن جو بھی ٹیم اس بارفائنل جیتے گی وہ پہلی مرتبہ ورلڈکپ جیتنے کااعزازحاصل کرے گی۔23 سال بعد دنیائے کرکٹ کو نیا عالمی چیمپیئن مل جائے گا کیونکہ گزشتہ برسوں کے دوران وہی ٹیمیں چیمپیئن بنتی رہیں جو اس سے قبل بھی چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کر چکی تھیں۔اس سے قبل 1996 میں سری لنکا کی ٹیم نے چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کیا تھا تو وہ آخری ٹیم تھی جو پہلی مرتبہ چیمپیئن بنی تھی۔پاکستان 1992میں ورلڈکپ جیتا۔اس کے بعد 1999 میں آسٹریلین ٹیم چیمپیئن بنی تھی لیکن وہ 1987 میں ٹائٹل اپنے نام کر چکی تھی اور پھر آسٹریلیا نے 2003 اور 2007 کا بھی ورلڈ کپ جیتنے کا اعزاز حاصل کیا۔2011 میں بھارتی ٹیم نے اپنی سرزمین پر چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کیا تو دوسری بار ورلڈ چیمپیئن بنی تھی، اس سے قبل 1983 میں کپیل دیو کی زیر قیادت بھارت پہلی مرتبہ چیمپیئن بنا تھا۔2015 ورلڈ کپ کے فائنل میں نیوزی لینڈ کی ٹیم پہنچنے میں کامیاب رہی تھی لیکن آسٹریلیا نے انہیں شکست دے کر پانچویں مرتبہ چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کر لیا تھا۔تاہم 2019 ورلڈ کپ کے فائنل میں انگلینڈ اور نیوزی لینڈ کی ٹیمیں پہنچ گئی ہیں لہٰذا اب دنیا ایک ایسی ٹیم کو عالمی چیمپیئن بنتا ہوا دیکھی گی جس نے اس سے قبل کبھی بھی یہ اعزاز حاصل نہیں کیا۔