ہائیکورٹ: 2006 سے ابتک تعینات سیکرٹریز ہائر ایجوکیشن کی فہرست طلب

ہائیکورٹ: 2006 سے ابتک تعینات سیکرٹریز ہائر ایجوکیشن کی فہرست طلب

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور (نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے اساتذہ کی گریڈ بیس میں ترقی کے بارے میں عدالتی فیصلے کے 13 سال گزر جانے کے باوجود عملدرآمد نہ ہونے کے کیس میں محکمہ تعلیم کے افسروں پر ناراضی کا اظہار کرتے ہوئے قرار دیا کہ عدالتی حکم سے روگردانی میں ملوث افسرون کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ عدالت آئندہ سماعت پر سیکرٹری ہائر ایجوکیشن اور دیگر متعلقہ فسروں کو ریکارڈ سمیت طلب کر لیا۔جسٹس محمد قاسم خان نے محمد دین اعوان اور ڈاکٹر محمد انور کی درخواست پر سماعت کی۔درخواست گزاروں کے وکیل نے دلائل میں کہاکہ فیصل آباد کے محکمہ تعلیم کے دو اساتذہ نے گریڈ بیس میں ترقی نہ دینے پر پنجاب سروس ٹربیونل سے رجوع کیا پنجاب سروس ٹربیونل نے 2005 میں گریڈ 20 میں ترقی دینے کا حکم دیا تھا لیکن بروقت عمل درآمد نہیں ہوا۔اجسٹس محمد قاسم خان نے فیصلہ پر تاخیر سے عمل پر سرکاری افسران پر سخت برہمی کا اظہار کیا عدالت نے 2006 سے 2019تک تعینات سیکرٹریز ہائر ایجوکیشن کی فہرست آئندہ سماعت پر طلب کرلی۔جسٹس قاسم خان نے کہاکہ تمام سیکرٹریز کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی ہوگی،آئندہ سماعت پر سیکرٹری ہائر ایجوکیشن خود تفصیلات لیکر پیش ہوں۔

مزید :

علاقائی -