نجی ہسپتال انتظامیہ کی مبینہ غفلت سے انتقال کرنیوالی نشوا کے والد کو انہی کے وکیل نے نوٹس بھیج دیا

نجی ہسپتال انتظامیہ کی مبینہ غفلت سے انتقال کرنیوالی نشوا کے والد کو انہی کے ...
نجی ہسپتال انتظامیہ کی مبینہ غفلت سے انتقال کرنیوالی نشوا کے والد کو انہی کے وکیل نے نوٹس بھیج دیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

کراچی (ویب ڈیسک) کراچی کے علاقے گلستان جوہر کے نجی ہسپتال میں مبینہ غلط انجیکشن سے شیر خوار نشوا کی ہلاکت سے متعلق کیس میں نشوا کے والد کے وکیل نے اپنے ہی موکل قیصر علی کو ہرجانے کا نوٹس بھیج دیا۔وکیل منیر احمد کا کہنا ہے کہ نشوا کے والد نے وکلاءکے بغیر ہسپتال انتظامیہ سے معاہدہ کیا، قیصر علی نے عدالت سے باہر معاہدہ کرکے پورے معاشرے کو مایوس کیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ قیصر علی نے ہسپتال انتظامیہ سے ملاقاتوں اور بات چیت کو وکلاءسے بھی خفیہ رکھا، جب کوئی خفیہ ڈیل نہیں کی تو بات چیت کیوں خفیہ رکھی گئی۔وکیل نے دعویٰ کیا کہ قیصر علی نے ملزمان کو رہائی دلانے کے لیے ہسپتال انتظامیہ کا ساتھ دیا، نشوا کے والد کے دباﺅ میں پولیس نے قتل کی دفعات درج کیں اور پھر انہی دفعات کو ختم کرانے کے لیے نشوا کے والد نے وکلاءپر دباﺅ ڈالا۔ان کا کہنا تھا کہ ہسپتال کو موت بیچنے کا لائسنس قیصر علی کی مدد سے دوبارہ جاری ہوا ہے۔