تحفظ ناموس رسالت قانون میں تبدیلی ہرگزبرداشت نہیں کرینگے، علماء کرام

    تحفظ ناموس رسالت قانون میں تبدیلی ہرگزبرداشت نہیں کرینگے، علماء کرام

  

لاہور( پ ر)عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت لاہور کے زیراہتمام ختم نبوت علماء کنونشن اقرأ روضۃ الاطفال رچناٹاؤن میں مجلس تحفظ ختم نبوت لاہور کے نائب امیر پیرمیاں محمدرضوان نفیس کی صدارت میں منعقد ہوا۔ کنونشن میں کثیرتعداد میں علماء اور قراء نے شرکت کی۔ختم نبوت کنوشن عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات مولانا عزیز الرحمن ثانی، لاہور کے سیکرٹری جنرل مولانا قاری علیم الدین شاکر، قاری جمیل الرحمن اختر، مفتی محتاراحمد، قاری محمداقبال، مولانا سید جنید بخاری، مولانا خالد محمود، مولانا بلال احمد، مولانا سعید وقار سمیت کئی کرام نے شرکت کی۔عزیز الرحمن ثانی نے بیان کرتے ہوئے کہا کہ تحفظ ناموس رسالت قانون میں تبدیلی ہرگزبرداشت نہیں کریں گے۔اسلام کے نام پر بننے والے ملک میں ناموس رسالت ایکٹ کے خلاف ہر سازش کا مقابلہ کیا جائے گا۔ناموس رسالت کا قانون تمام انبیاء کرام کی عزت اور ناموس کا دربان اور چوکیدار ہے۔

مولانا علیم الدین شاکر نے کہا کہ ناموس رسالت قانون کیخلاف یہودی و قادیانی لابی سازشوں میں مصروف عمل ہے،ماضی میں بھی ایسی ناپاک کوشش کی گئی لیکن ان طاغوتی قوتوں کو خفت کا سامنا کرنا پڑا۔اسلامیان پاکستان ناموس رسالت ایکٹ کیخلاف کوئی بھی سازش ہر گز برداشت نہیں کرینگے۔ دریں اثنا عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت یونٹ سبزہ زار کے زیراہتمام ہنجروال ملتان روڈ لاہور میں ختم نبوت اجتماع منعقد ہوا۔ مبلغ ختم نبوت لاہور مولانا عبدالنعیم،ناظم تبلیغ مولانا عبدالعزیز، مولانا عبدالشکوریوسف، حاجی محمدشفیق، مولانا مفتی محمدعثمان، مفتی محمدزاہد، قاری محمد شفیق ودیگر علماء شرکت کی۔ اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے مولانا عبدالنعیم نے کہا کہ ختم نبوت کی بر کت سے دین اسلام کی تعلیمات محفوظ ہیں اگر درمیان سے عقیدہ ختم نبوت کو نکال دیا جائے نہ دین باقی رہتا ہے نہ دین اسلام کی تعلیمات اور نہ ہی قرآن باقی رہے گا کیونکہ بعد میں آنے والے ہر نبی کو دین میں تبدیلی اور تنسیخ کا حق حاصل ہو گا اس لئے عقیدہ ختم نبوت پر پورے دین کی عمارت قائم ہے اور اسی میں امت مسلمہ کی وحدت کا راز مضمر ہے۔مولانا عبدالعزیز نے کہا کہ عقیدہ ختم نبوت اور ناموس رسالت کی حفاظت کے لیے امت مسلمہ ہمیشہ حساس رہی ہے عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ کے لیے بارہ سو صحابہ کرام نے جام شہادت نوش کیا ہے۔حاجی شفیق نے کہا کہ ناموس رسالت کا تحفظ کرنا قرب خدا وندی اور نجات اخروی حاصل کرنے کا ذریعہ ہے۔ ختم نبوت کے تحفظ اور فتنہ قادیانیت کے تعاقب کا کام تمام عبادات کا خلاصہ ہے۔ مجلس تحفظ ختم نبوت کے رہنماؤں نے مسلم لیگ (ن) کے خواجہ محمد آصف کی پارلیمنٹ میں تقریر کے ان الفاظ ”کسی مذہب کو کسی اور مذہب کے اوپر کوئی فوقیت حاصل نہیں ہے۔“ پر تنقید کرتے ہوئے کہا: خواجہ آصف کا یہ بیان اسلامی تعلیمات کے سراسر منافی اور قرآنی آیات کے انکار پر مبنی ہے اسلام کی ہر دین پر فوقیت اور برتری وہ عقیدہ ہے کہ جس کے دل سے اعتراف اور زبان سے اقرار کے بغیر کوئی شخص مسلمان ہی نہیں ہو سکتا۔ قرآن مجید میں اسلام کو اللہ تعالیٰ کا پسندیدہ دین کہا گیا ہے۔ قرآن مجید نے تمام ادیان پر اسلام کی ترجیح کو واضح طور پر بیان کیا ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -