سابق جسٹس لاہور ہائی کورٹ سید زاہد حسین بخاری سپرد خاک

سابق جسٹس لاہور ہائی کورٹ سید زاہد حسین بخاری سپرد خاک

  

شیخوپورہ(بیورورپورٹ)سابق جسٹس لاہور ہائی کورٹ سید زاہد حسین بخاری مختصر علالت کے بعد انتقال کر گئے وہ گذشتہ ایک ماہ سے صاحب فراش تھے انہیں رات گئے دل کا دورہ پڑا جو جان لیواء ثابت ہواانہیں گلزار عائشہ پارک میں نماز جنازہ کے بعد سیکڑوں سوگواروں کی موجودگی میں مقامی قبرستان میں سپرد خاک کردیا گیا۔نماز جنازہ میں تمام شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد کی بڑی تعداد نے شرکت کی، سید زاہد حسین بخاری مرحوم مرتے دم تک پیپلز پارٹی سے وابستہ رہے انہیں پیپلز پارٹی کے دور میں بھی مختصر عرصہ کے لیے جسٹس اور ایڈووکیٹ جنرل پنجاب بنایا گیا تھا وہ نواز لیگ کی رکن پنجاب اسمبلی سیدہ عظمیٰ بخاری ایڈووکیٹ کے والد اور سابق ایم پی اے سمیع اللہ خان کے سسر، مرکزی انجمن تاجران کے نائب صدر سید واجد حسین بخاری کے بڑے بھائی تھے۔مرحوم کے دونوں بیٹے اور داماد سید وقار کاظمی ایڈووکیٹ ہیں۔انہوں نے 45 سالہ وکالت کے دوران سیکڑوں نامور شاگرد پیدا کیے جن میں سابق جسٹس لاہور ہائی کورٹ چوہدری مظہر اقبال سدھو بھی شامل ہیں، مرحوم کی نماز جنازہ شیخوپورہ کے مقامی پارک گلزار عائشہ میں ادا کی گئی جس میں نواز لیگ کے صوبائی صدر رانا ثناء اللہ خاں ایم این اے، سابق سینئر صوبائی وزیر ملک مشتاق احمد اعوان، پی ٹی آئی کے ضلعی صدر کنور عمران سعید، پیپلز پارٹی کے ضلعی رہنما چوہدری منیر قمر واہگہ سمیت دیگر سیاسی مذہبی جماعتوں کے رہنماؤں، سرکاری افسران اور معززین علاقہ کی بڑی تعداد نے شرکت کی جبکہ صدر عارف علوی وزیراعظم عمران خان گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار سابق صدر آصف زرداری چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول زرداری بھٹو سابق وزرائے اعظم سید یوسف رضا گیلانی راجہ پرویز اشرف اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف علامہ سید ساجد نقوی سپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الہٰی کے علاوہ وکلاء برادری کے قائدین عابد ساقی سید محمد کلیم احمد خورشید حامد خان، ممبر پنجاب بار کونسل رانا سیف اللہ خاں، محمد اعظم تارڑ احسن بھون طاہر نصراللہ وڑائچ رانا ضیاء الرحمنٰ منیر اے ملک رشید اے رضوی نصیر الدین خان نیئر زاہد سعید چوہدری نے سید زاہد حسین بخاری ایڈووکیٹ کی وفات پر اظہار تعزیت کیا ہے اور کہا ہے کہ مرحوم نے ملک میں آئین و قانون کی بالادستی کے لیے چلنے والی تحریکوں میں ہمیشہ بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔

سپرد خاک

مزید :

صفحہ آخر -