سمارٹ لاک ڈاؤن کے مثبت نتائج، لاہور میں کورونا کیسز میں نمایا ں کمی، ملک بھر میں 87افراد جاں بحق 2870نئے کیسز رپورٹ

سمارٹ لاک ڈاؤن کے مثبت نتائج، لاہور میں کورونا کیسز میں نمایا ں کمی، ملک بھر ...

  

اسلام آباد، کراچی، لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)ملک میں کورونا سے مزید 87 جاں بحق ہو گئے جبک 2870 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ملک میں مہلک وائرس سے ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 5257 ہوگئی، نئے کیسز سامنے آنے کے بعد متاثرہ مریضوں کی تعداد 251005 تک جاپہنچیپاکستان میں کورونا وائرس نے مزید 87 افراد کی جان لے لی اور 2870 نئے کیسز کی تصدیق کے بعد مریضوں کی مجموعی تعداد 251005 ہوگئی ہے جب کہ 5257 افراد اس مہلک وائرس سے جاں بحق ہو چکے ہیں۔اب تک پنجاب میں 2006، سندھ میں 1795 اور خیبر پختونخوا میں 1099 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں جب کہ اسلام آباد میں 152، بلوچستان میں 126، ا?زاد کشمیر میں 43 اور گلگت بلتستان میں 36 افراد کا انتقال ہوا ہے۔اتوار کو ملک بھر سے کورونا کے مزید 2870کیسز اور 87 ہلاکتیں رپورٹ ہوئی ہیں جن میں سے سندھ میں 48 ہلاکتیں اور 1713 کیسز، پنجاب میں 21 ہلاکتیں اور 565 کیسز جب کہ خیبرپختونخوا سے 12 ہلاکتیں اور 408 نئے کیسز سامنے آئے ہیں۔اس کے علاوہ وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں 96 کیسز اور پانچ ہلاکتیں، آزاد کشمیر میں 32 کیسز اور ایک ہلاکت جب کہ گلگت بلتستان اور بلوچستان سے 28، 28 نئے کیسز رپورٹ ہوئے۔پنجاب میں کورونا کے565 کیسز اور 21 ہلاکتیں رپورٹ ہوئی ہیں جن کی تصدیق نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر کے پورٹل پر کی گئی ہے۔سرکاری پورٹل کے مطابق پنجاب میں کورونا کے مریضوں کی کْل تعداد 86556 اور ہلاکتیں 2006 ہوچکی ہیں۔وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں مزید 96 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس کے بعد وہاں مریضوں کی کل تعداد 14 ہزار 23 اور ا?ج 5 مزید ہلاکتوں کے بعد اموات کی تعداد 152 ہوگئی ہے۔گلگت بلستان میں بھی 26 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد وہاں اب تک مریضوں کی تعداد 1658 ہوگئی ہے جب کہ وہاں اموات کی تعداد 36 ہے۔آزاد کشمیر میں 32 نئے کیسز اور ایک مریض کی ہلاکت کی تصدیق کی گئی ہے۔آزاد کشمیر اب تک مجموعی طور پر 1564 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے جب کہ وہاں اموات کی تعداد 43 ہے۔اتوار کو بلوچستان سے کورونا کے مزید 28 کیسز سامنے آئے جس کے بعد صوبے میں متاثرہ مریضوں کی تعداد 11185 ہوگئی ہے۔صوبے میں کورونا سے اب تک 126 افراد انتقال کرچکے ہیں۔اس کے علاوہ بلوچستان میں اب تک کورونا سے 7598 مریض صحتیاب بھی ہوچکے ہیں۔اتوار کو سندھ میں کورونا سے مزید 48 افراد انتقال کرگئے جس کے بعد صوبے میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 1795 ہوگئی۔گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 1713 افراد میں مہلک وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد متاثرہ مریضوں کی تعداد 105533 تک جاپہنچی ہے۔صوبے میں صحت یاب مریضوں کی تعداد 61958 ہوگئی ہے جو کہ مجموعی کیسز کا 50 فیصد سے زائد ہے۔اتوار کو خیبرپختونخوا میں کورونا وائرس کے باعث مزید 12 افراد انتقال کرگئے جس کے بعد صوبے میں ہلاکتوں کی تعداد 1099 ہوگئی۔صوبائی محکمہ صحت کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 408 افراد میں مہلک وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد صوبے میں متاثرہ مریضوں کی تعداد 30486 تک پہنچ گئی ہے۔اب تک صوبے میں 21158 افراد کورونا وائرس سے صحت یاب بھی ہو چکے ہیں۔

کورونا ہلاکتیں

لاہور(آئی این پی) لاہور میں کورونا کے تشویشناک مریضوں کی تعداد گزشتہ 10 دنوں میں 50 فیصد تک کم ہو گئی ہے، 7 بڑے سرکاری ہسپتالوں کے آئی سی یو مریضوں سے مکمل خالی ہیں، کورونا کیلئے مختص 178 آئی سی یو بیڈز اور وینٹی لیٹرز میں سے 110 خالی ہو گئے۔محکمہ صحت پنجاب کے مطابق لاہور میں کورونا وائرس کے تشویشناک مریضوں کا زور ٹوٹنے لگا ہے، محکمہ صحت کی رپورٹ کے مطابق شہر کے 16 سرکاری ہسپتالوں میں کورونا کیلئے مختص 178 آئی سی یو بیڈز اور وینٹی لیٹرز میں سے 110 خالی ہو گئے، آئی سی یوز کے وینٹی لیٹرز کا مجموعی آکوپینسی ریٹ 38 فیصد تک رہ گیا ہے، شہر کے 16 سرکاری ہسپتالوں میں کورونا کیلئے مختص 499 ہائی ڈیپنڈینسی بیڈز میں 400 خالی پڑے ہیں، شہر کے سرکاری ہسپتالوں کے ہائی ڈ یپنڈینسی بیڈز کا مجموعی آکوپینسی ریٹ 19.8 فیصد ہے۔رپورٹ کے مطابق میو ہسپتال کے 50 وینٹیلیٹرز میں 39 خالی جبکہ 11 پر مریض ہیں، 227 ہائی ڈیپنڈینسی بیڈز میں سے 195 خالی جبکہ 32 پر مریض موجود ہیں، پی کے ایل آئی میں 20 وینٹی لیٹرز میں 10 خالی اور 10 پر مریض زیر علاج ہیں، پی کیایل ا?ئی میں ایچ ڈی یو کے 16 بیڈز میں 11 خالی اور 5 پر مریض ہیں۔ جناح ہسپتال کے 15 وینٹی لیٹرز میں سے 6 خالی اور 9 پر مریض زیر علاج ہیں، سروسز ہسپتال کے 32 وینٹی لیٹرز میں سے 14 خالی اور 18 پر مریض زیر علاج ہیں۔وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشدنے کہا ہے کہ ایکسپو فیلڈ ہسپتال میں 990بیڈز کا آئسولیشن وارڈ بنایا گیا تھا، تاہم اب ایکسپو سینٹر ہسپتال میں کوئی مریض نہیں رہا۔ ایکسپو سینٹر لاہور کے فیلڈ ہسپتال میں زیرعلاج تمام مریض ڈسچارج ہو گئے ہیں، جس کے بعد ایکسپو سینٹر فیلڈ ہسپتال کے تینوں ہالز کو بند کردیا گیا ہے۔یاسمین راشد نے کہا کہ ہسپتال کے لیے 110ڈاکٹرز، نرسز اور پیرامیڈکس کو مختص کیا گیا تھا، ایکسپو سینٹر میں 300بیڈ پر آکسیجن کی سہولت موجود ہے اور محرم تک ایکسپو سینٹر کا ہسپتال قائم رہے گا۔وائس چیئرمین ایڈوائزری بورڈ ڈاکٹر اسد اسلم نے کہاہے کہ لاہور میں کورونا مریضوں میں واضح کمی آئی ہے، کورونا کیلئے مختص 3ہزار بیڈ میں سے 27سو بیڈ خالی ہیں، جبکہ 22بیڈ، 4سو ایچ ڈی یو کے بیڈ اور 110وینٹی لیٹر کے بیڈ خالی ہیں۔سیکرٹری صحت پنجاب نبیل اعوان نے کہا کہ ایکسپو سینٹر فیلڈ ہسپتال کے ڈاکٹرز اور اسٹاف کو میو ہسپتال بھیج دیاگیا ہے۔عید کے بعد کورونا وائرس کی ایک اور لہرآنے کا خدشہ ہے، جبکہ اگر مریض رپورٹ نہ ہوئے تو اگست کے آخرمیں ایکسپوہسپتال مکمل بند کرنے کا فیصلہ کرینگے۔انہوں نے کہا کہ ایکسپو سینٹر فیلڈ ہسپتال کا بل بھیجا گیا ہے اس میں ایکسپو سینٹر کا کرایہ بھی شامل ہے۔ بجلی اور دیگر بلوں کی مد میں دو کروڑ روپے بنتے ہیں۔سیکرٹری صحت نے کہا کہ اپریل میں ایکسپو سینٹر لیتے وقت واضح کیا گیا تھاکہ کرایہ نہیں لیا جائے گا جبکہ صفائی، سکیورٹی اور دیگر انتظامات کے اخراجات محکمہ صحت کو برداشت کرنا تھے۔وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے اطلاعات و تعلقات عامہ اور بلدیات کامران خان بنگش نے کہا ہے کہ خیبر پختونخوا حکومت نے کورونا کے پیش نظر عیدالاضحیٰ سے پہلے مویشی منڈیوں کے لئے قواعد وضوابط جاری کئے ہیں تاکہ عوام کرونا وباء سے محفوظ رہ سکیں۔ سول سیکرٹریٹ اطلاع سیل میں میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے کامران بنگش نے کہا کہ قواعد وضوابط کے مطابق مویشی منڈیاں آبادی سے باہر لگائی جائیں گی اوربڑی مویشی منڈیوں کی بجائے زیادہ تعداد میں چھوٹی منڈیاں لگائی جائینگی تاکہ کسی ایک جگہ لوگوں کا رش نہ بنے۔ مویشی منڈیوں کے اطراف میں رش سے بچنے کے لیے بھی انتظامات کیے جائیں گے جبکہ ٹریفک کے رش سے بچنے کے لیے ٹریفک پولیس کی ذمہ داری ہوگی کہ وہ پلان ترتیب دے۔ ضلعی انتظامیہ ان منڈیوں کی صورتحال کو چیک کریگی اور بغیر رجسٹریشن کوئی مویشی منڈی نہیں لگائی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ مویشی منڈیوں میں بڑی عمر کے افراد اور چھوٹے بچوں کے داخلے کی اجازت نہیں ہوگی اسلئے بزرگوں سے گزارش ہے کہ وہ منڈیوں میں آنے سے گریز کریں۔ کامران بنگش کا کہنا تھا کہ جس طرح باقی سب مقامات پر بغیر ماسک داخلے کی ممانعت ہے,اسی طرح مویشی منڈیوں میں ماسک کے بغیر آنے کی اجازت نہیں جبکہ ہر آنے والے شخص کا درجہ حرارت تھرمل گن سے چیک کیا جائے گا۔ منڈیوں میں ہاتھوں کے دھونے اور سینیٹائز کرنے کے لیے انتظامات موجود ہوں گے۔

مریض کمی

نیویارک(این این آئی)دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 1 کروڑ 28 لاکھ 47 ہزار 288 تک جا پہنچی ہے جبکہ اس موذی وائرس سے ہلاکتیں 5 لاکھ 67 ہزار 734 ہو گئیں۔کورونا وائرس کے دنیا بھر میں 47 لاکھ 96 ہزار 308 مریض اسپتالوں، قرنطینہ مراکز میں زیرِ علاج اور گھروں میں آئسولیشن میں ہیں، جن میں سے 58 ہزار 794 کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ 74 لاکھ 83 ہزار 246 مریض صحت یاب ہو چکے ہیں۔امریکی میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکا تاحال کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثرہ ملک ہے جہاں ناصرف کورونا مریض بلکہ اس سے ہلاکتیں بھی اب تک دنیا کے تمام ممالک میں سب سے زیادہ ہیں۔امریکا میں کورونا وائرس سے اب تک 1 لاکھ 37 ہزار 403 افراد موت کے منہ میں پہنچ چکے ہیں جبکہ اس سے بیمار ہونے والوں کی مجموعی تعداد 33 لاکھ 55 ہزار 646 ہو چکی ہے۔کورونا وائرس کے امریکا میں 17 لاکھ 27 ہزار 797 مریض اسپتالوں، قرنطینہ مراکز میں زیرِ علاج اور گھروں میں آئسولیشن میں ہیں، جن میں سے 15 ہزار 819 کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ 14 لاکھ 90 ہزار 446 کورونا مریض اب تک شفایاب ہو چکے ہیں۔کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد کے حوالے سے ممالک کی فہرست میں برازیل دوسرے نمبر پر ہے جہاں کورونا کے مریضوں کی تعداد 18 لاکھ 40 ہزار 812 تک جا پہنچی ہے جبکہ یہ وائرس 71 ہزار 492 زندگیاں نگل چکا ہے۔بھارت کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں تیزی سے اضافے کے ساتھ اس فہرست میں تیسرے نمبر پر پہنچ گیا ہے، جہاں کورونا سے 22 ہزار 687 ہلاکتیں ہو چکی ہیں جبکہ اس سے متاثرہ مریضوں کی تعداد 8 لاکھ 50 ہزار 358 ہو گئی۔کورونا وائرس سے روس میں کل اموات 11 ہزار 205 ہو گئیں جبکہ اس کے مریضوں کی تعداد 7 لاکھ 20 ہزار 547 ہو چکی ہے۔پیرو میں کورونا کے باعث 11 ہزار 682 ہلاکتیں اب تک ہو چکی ہیں جبکہ یہاں کورونا کیسز 3 لاکھ 22 ہزار 710 رپورٹ ہوئے ہیں۔چلی میں کورونا وائرس سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 6 ہزار 881 ہو گئی جبکہ کورونا کے کل کیسز 3 لاکھ 12 ہزار 29 ہو گئے۔ادھرجنوبی جاپان میں دو جزائر میں متعین امریکی میرینز میں بھی کرونا کی وبا پھیل گئی حکام کا کہنا تھا کہ جنوبی جاپان میں دو فوجی اڈوں میں کرونا پھیلنے سے دسیوں فوجی اس کا شکار ہوئے۔ حکام نے اس حوالے سے امریکی فوج سے تمام تر تفصیلات سامنے لانے کو کہا۔اوکیناوا کے صوبے کے عہدیداروں نے کہا کہ وہ صرف اتنا کہہ سکتے ہیں کہ چند درجن کیسزحال ہی میں سامنے آئے ہیں کیونکہ امریکی فوج نے اصل تعداد ظاہر نہ کرنے کو کہاہے۔ عہدیداروں نے بتایا کہ یہ وبا میرین کور فوٹنما ایئر فورس بیس اور ہینسن کیمپ میں پھیل رہی ہے۔انڈونیشیاء میں ایک فوجی اکیڈمی میں تقریباً 1300افراد کا کروناوائرس ٹیسٹ مثبت آیا ہے، یہ بات ایک اہلکار نے بتائی ہے جب ملک وباء پر قابو پانے کی جدوجہد کر رہا ہے۔ چیف آف آرمی سٹاف جنرل اندیکا پرکاسا نے گزشتہ رات کہا ہے کہ ملک کے سب سے زیادہ گنجان آباد صوبے مغربی جاواکی انڈونیشئین آرمی افیسر کینڈیڈیٹ سکول کو قرنطینہ میں تبدیل کردیا گیا ہے اور 30افراد کو ابتدائی طور پر درمیانے درجے کی علامات کے ساتھ ہسپتال لے جایا گیا

عالمی ہلاکتیں

مزید :

صفحہ اول -