پی ایم اے پنجاب کے صدر کا ہیلتھ کیئر کمیشن کی غیرقانونی کاروائی ،کا احتجاجاً بائیکاٹ

پی ایم اے پنجاب کے صدر کا ہیلتھ کیئر کمیشن کی غیرقانونی کاروائی ،کا احتجاجاً ...

لاہور( جنرل رپورٹر) پی ایم اے اور دیگر ڈاکٹرز تنظیموں کے نمائندہ پی ایم اے پنجاب کے صدر پروفیسر ڈاکٹر اشرف نظامی نے ہیلتھ کیئر کمیشن کی غیرقانونی کاروائی اور ڈکٹیٹریل رویہ کے خلاف ہونے والے اجلاس کی کاروائی کا احتجاجاً بائیکاٹ کیا اور ڈاکٹرز نمائندوں کی غیر موجودگی میں 30سیکنڈ کے اندر بغیر پڑھے مینیمم ڈلیوری سٹینڈر جیسے انتہائی اہم رولز کی منظوری کو میڈیکل پروفیشن کی تاریخ کا سیاہ دن قرار دیاہے۔بعدا زاں ایک مشترکہ اجلاس میں ڈاکٹر برادری نے ہیلتھ کیئر کمیشن کی غیرقانونی کاروائی کو مکمل طورپر مسترد کر دیاہے اور کہا ہے کہ نامکمل TAC کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے ۔ کمیشن کے ایکٹ کے مطابق اسٹیک ہولڈرز کی نمائندگی کو ایک سازش کے تحت لسٹ میں شامل نہیں کیا گیاہے اور TACکے موجودہ کنوینر ڈاکٹر اسد اشرف کو بلایا ہی نہیں گیا اور اِن کے بغیر TACکا اجلاس غیر قانونی ہے اور اس کے فیصلوں کی کوئی حیثیت نہیں ہے۔اجلاس میں اس امر پر شدید افسوس کا اظہار کیا گیا کہ ایکٹ کے مطابق کوئی سرکاری ملازم کمیشن کا عہدیدار نہیں ہو سکتا مگر حاضر سروس بیوروکریٹ ڈاکٹر اجمل اپنی غیر قانونی نوکری بچانے کیلئے ڈاکٹروں کی طرف سے انتہائی محنت سے بنایا جانے والا ایکٹ تباہ و برباد کرنے میں مصروف ہیں جس کا عملی مظاہرہ آج کے اجلاس میں ہوا ہے۔اجلاس میں اپنے ذاتی مفادات کیلئے میڈیکل پروفیشن کی عزت و تکریم کا سودا کرنے والے افراد کو بے نقاب کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔ اس سلسلہ میں صورت حال سے آگاہ کرنے کیلئے پنجاب بھر میں رابطہ مہم چلائی جائے گی اور آئندہ کا لائحہ عمل طے کرنے کیلئے پی ایم اے کی مرکزی کونسل کا اجلاس لاہور میں طلب کر لیا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...