51300 کم عمر ڈرائیوروںکے خلاف کارروائی عمل میں لائی جا چکی

51300 کم عمر ڈرائیوروںکے خلاف کارروائی عمل میں لائی جا چکی

لاہور(وقائع نگارخصوصی)چیف ٹریفک آفیسرلاہورسہیل چوہدری نے کہا ہے کہ کم عمر ڈرائیوروں کی حوصلہ شکنی کے خاطر خواہ نتائج حاصل ہوئے ہیں۔سڑکوں پر کمسن ڈرائیوروں کی تعداد میں کمی کے ساتھ ہی حادثات کی شرح میں بھی نمایاں کمی واقع ہوئی ہے۔ سٹی ٹریفک پولیس کی محنت، میڈیا اور والدین کے تعاون سے یہ مہم کامیابی سے جاری ہے۔ اب تک 51300 کم عمر ڈرائیوروںکے خلاف کارروائی عمل میں لائی جا چکی ہے۔ ایس پی سٹی نے اٹلس ہنڈا کے تعاون سے لگائے گئے آگاہی کیمپ پل نہر مال پر شہریوں میں پمفلٹ تقسیم کیے۔ سی ٹی اوکی ہدایت پر ایس پی سٹی نے پل نہر مال ، فوارہ چوک اور لبرٹی چوک لگائے گئے ٹریفک آگاہی کیمپ کا وزٹ کیا اور شہریوںمیں پمفلٹ تقسیم کیے ۔انہوں نے کہا کہ کمسن ڈرائیورزکی حوصلہ شکنی کے لیے شروع کی جانے والی مہم میںایجوکیشن یونٹ اور وارڈنز نے شہریوں کو ایجوکیٹ کرنے کا سلسلہ بھی جاری رکھا اور والدین کو اخلاقی طور پر آمادہ کیا کہ وہ اپنے کم عمر بچوں کو ڈرائیونگ نہ کرنے دیں جس کے خاطرخواہ نتائج حاصل ہوئے ہیں۔ سہیل چوہدری نے کہا کہ اس مہم میں میڈیا اور والدین نے بھی اپنا بھرپور کردار ادا کیا جو خوش آئند بات ہے۔

 انہوں نے کہاکہ ایک ماہ کے دوران تقریباََ 51300 کم عمر ڈرائیورز کے خلاف کارروائی کی گئی۔ سی ٹی او نے سرکل افسران اور سیکٹر انچارجز کو ہدایت کی کہ کمسن ڈرائیورز کے خلاف کارروائی جاری رکھیں جبکہ ایجوکیشن یونٹ اور وارڈنز شہریوں کو اس بارے میں ایجوکیٹ بھی کرتے رہیں اور شہریوں کو ہدایت کی کہ وہ اخلاقی طور پر اپنے کم عمر بچوں کو ہرگز ڈرائیونگ نہ کرنے دیں اور خود بھی ٹریفک قوانین کی پاسداری کرتے ہوئے اچھا شہری ہونے کا ثبوت دیں۔

مزید : علاقائی