قطر میں یورپی خاتون کا ریپ،جب شکایت لے کر پولیس سٹیشن پہنچی تو ایسا کچھ ہو گیاکہ جان کر عورت کی جان نکل جائے

قطر میں یورپی خاتون کا ریپ،جب شکایت لے کر پولیس سٹیشن پہنچی تو ایسا کچھ ہو ...
قطر میں یورپی خاتون کا ریپ،جب شکایت لے کر پولیس سٹیشن پہنچی تو ایسا کچھ ہو گیاکہ جان کر عورت کی جان نکل جائے

  

دوحہ(مانیٹرنگ ڈیسک) قطر میں جنسی زیادتی کی شکایت کرنے والی نیدرلینڈ کی لاﺅرا (Laura)نامی خاتون ہی کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ قطری پولیس نے اس پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ یہاں جسم فروشی کے دھندے کے لیے آئی تھی۔ آئرش اخبار دی جرنل کی رپورٹ کے مطابق خاتون نے پولیس کو شکایت کی تھی کہ ”مجھے ایک ہوٹل میں نشہ آور دوا کھلائی گئی اور جب میں صبح اٹھی تو کسی اور اپارٹمنٹ میں موجود تھی۔ اس دوران نشے کی حالت میں مجھ سے زیادتی کی گئی۔“ لاﺅرا کے وکیل کا کہنا ہے کہ ”میری مو¿کہ قطر ہوٹل میں ٹھہری تھی جہاں اس نے رات کو شراب پی اور ڈانس کرنے چلی گئی۔ اس ہوٹل میں شراب ممنوع نہیں ہے۔ کچھ دیر ڈانس کرنے کے بعد اس کی طبیعت کچھ ناساز ہو گئی اور وہ واپس اپنی ٹیبل پر آ گئی۔ اس کے بعد اسے کچھ ہوش نہ رہا۔ جب وہ صبح اٹھی تو کسی نامانوس اپارٹمنٹ میں موجود تھی۔“ رپورٹ کے مطابق خاتون سے مبینہ زیادتی کرنے والے ملزم کو بھی گرفتار کر لیا گیا ہے تاہم اس شخص کا کہنا ہے کہ” اس رات جو کچھ ہوا وہ لاﺅرا کی رضامندی سے ہوا تھا اور لاﺅرا نے اس کے عوض مجھ سے رقم بھی لی تھی۔“ دوسری طرف لاﺅرا نے ملزم کے الزام کو یکسر رد کر دیا ہے۔اس مقدمے کی سماعت آئندہ پیر سے شروع ہو رہی ہے۔ واضح رہے کہ ایسا ہی ایک کیس اس سے قبل متحدہ عرب امارات میں دیکھا جا چکا ہے جہاں ناروے کی ایک 24سالہ لڑکی نے اپنے باس کے خلاف پولیس میں رپورٹ درج کروائی تھی کہ اس نے اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا ہے۔ پولیس نے اسی لڑکی پر جھوٹا بیان دینے، غیرمہذب روئیے اور شراب پینے جیسے الزامات عائد کرکے عدالت میں پیش کر دیا جہاں سے اسے 16ماہ قید کی سزا سنا دی گئی تھی۔ تاہم بعدازاں حکام کی طرف سے اس کی سزا معاف کر دی گئی تھی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس