جنرل ہسپتال میں نئے بھرتی ہونیوالے ملازمین کے ریکارڈ کی جانچ پڑتال کا حکم

جنرل ہسپتال میں نئے بھرتی ہونیوالے ملازمین کے ریکارڈ کی جانچ پڑتال کا حکم

  



لاہور(خبرنگار) پرنسپل پوسٹ گرایجویٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ و لاہور جنرل ہسپتال پروفیسر ڈاکٹر خالد محمود نے ادارے میں بھرتی ہونے والے 300 کے قریب نئے ملازمین کی حکومتی پالیسی کے مطابق تعلیمی اسناد و سرٹیفکیٹس کی جانچ پڑتال کرانے کا حکم دیا ہے ۔ انہوں نے ایم ایس ونرسنگ انتظامیہ ایل جی ایچ اور ایڈیشنل ڈین پی جی ایم آئی کو ہدایت کی کہ وہ ملازمین کی تعلیمی اسناد ، ڈپلومہ ، ڈگری اور دیگر کاغذات جن کی بنیاد پر انہیں ملازمتیں مہیا کی گئی ہیں ان کی متعلقہ تعلیمی بورڈز و دیگر اداروں سے تصدیق کا کام ایک ماہ میں مکمل کر لیا جائے۔ پروفیسر خالد محمود نے واضح کیا کہ جو ملازمین تعلیمی اسناد کی تصدیق میں انتظامیہ سے عدم تعاون یا تاخیری حربے استعمال کریں گے انکے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی ۔ پرنسپل نے ہسپتال اور پی جی ایم آئی کی ٹیم میں شامل ہونے والے نئے سٹاف ممبران کو تاکید کی کہ انہوں نے کوئی روایتی یا عام محکمہ جائن نہیں کیا بلکہ طب جیسے مقدس شعبے میں دکھی انسانیت کی خدمت کا بیڑہ اٹھایا ہے لہذا انہیں اپنے فرائض محنت ، لگن اور فرض شناسی سے سرانجام دے کر حکومت اور عوام کی توقعات پر پورا اترنا ہو گا ۔ پروفیسر خالد محمود نے انتظامی ڈاکٹروں کو بھی ہدایت کی کہ وہ ملازمین کی حاضری، کارکردگی اور ان کے مریضوں کے ساتھ رویے کو باقاعدگی سے مانیٹر کریں ۔ انہوں نے کہا کہ ڈسپلن کی پابندی نہ کرنے والے اور پیشگی منظوری کے بغیر چھٹی پر چلے جانے والے عملے کے خلاف سخت ایکشن ہو گا ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1