سستی روٹی کی طرح رمضان بازار بھی کرپشن کی آماجگاہ بن چکے ہیں ‘ ڈاکٹر افضل

سستی روٹی کی طرح رمضان بازار بھی کرپشن کی آماجگاہ بن چکے ہیں ‘ ڈاکٹر افضل

  



ہیڈراجکاں (نمائندہ پاکستان) ممبر صوبائی اسمبلی ق لیگ ڈاکٹر محمد افضل نے اپنی رہائش گاہ ہیڈراجکاں پر میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے(بقیہ نمبر28صفحہ12پر )

ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت نے عوام کو بیوقوف بنانے میں کبھی بھی کوئی کسر نہیں چھوڑی۔ہمیشہ کی طرح اس بار بھی پنجاب حکومت نے عوام کو ریلیف دینے کے لئے چار ارب 40کروڑ روپے کی خطیر رقم رکھی ۔ مگر ہیڈراجکاں میں لگایا گیا رمضان بازار کے لئے 30کریانہ کی دوکان سے 72000روپے پر پٹرول پمپس، فی کس 5ہزار روپے ، سبزی فروٹ والوں سے بھی فی کس 1000روپے ، قصابوں کو چکن فروش والوں سے بھی پانچ سے10ہزاروپے وصول کیے گئے ہیں۔پھر انتظامیہ آئے روز دوکانداروں کو بھاری جرمانے کر کے لاکھوں روپے اکھٹے کر رہے ہیں۔ اگر عوام سے ہی لاکھوں روپے لوٹ کر لاہور بھیجنے ہیں تو پھر چار ارب چالیس کروڑ روپے کدھر گئے ہیں۔غریب عوام کو حکومت کی طرف سے ایک روپیہ بھی ریلیف نہیں دیا گیا بلکہ وزیروں مشیروں کی عیاشی کے لئے غریبوں کے نام پر رقم مختص کی گئی ہے ۔ رمضان بازار بھی سستی روٹی کی طرح کرپشن کی بڑی آماہ جگاہ بن گئے ہیں۔

ڈاکٹر افضل

مزید : ملتان صفحہ آخر