رمضان اور عام بازاروں میں گرانفروشی معمول، چینی کے کوٹہ میں کرپشن کا انکشاف

رمضان اور عام بازاروں میں گرانفروشی معمول، چینی کے کوٹہ میں کرپشن کا انکشاف

  



کوٹ ادو،میلسی،چوک میتلا،بہاولپور،حاصل پور، چوک اعظم،نواں کوٹ،صادق آباد،ڈیرہ غازیخان (نمائندگان)ایک طرف وزرا،ارکان اسمبلی،انتظامی وپولیس افسران کے دورے اور شہریوں کو ریلیف فراہمی کے اقدامات اک سلسلہ جاری،دوسری جانب رمضان اور عام بازاروں میں لوٹ مار معمول،چینی کے سستے سیل پوائنٹس پر غریبوں کا استحصال،رمضان بازاروں کی چینی کئے کوٹہ میں کرپشن کا انکشاف،ناقص اشیا کی مہنگے داموں فروخت کے باعث عوام نے رمضان بازاروں سے مہنگے داموں فروخت کے باعچ عوام نے رمضان بازاروں سے منہ نہ موڑیں جبکہ انتظامیہ کی کارروائیوں کے دوران جعلی اشیاء کی فروخت اور ناجائز منافع خوری پر متعدد افراد گرفتار،مقدمات اور ناجائز منافع خوری پر متعدد افراد گرفتار،مقدمات درج کرلئے گئے اس سلسلہ میں کوٹ ادو سے تحصیل رپورٹر کے مطابق تحصیل کوٹ ادو کے تینوں سستے رمضان بازاروں میں لگائے جانے والے سستے چینی کے سیل پوائنٹوں پر غریبوں کا استحصال جاری ہے ، 2کلو چینی لینے کیلئے آنیوالے غریب روزہ داروں کو کڑی دھوپ اور گرمی میں گھنٹوں لائن میں کھڑا کرنا معمول بنا لیا ہے ، جبکہ صبح کے اوقات میں سٹال پر چینی لے آنا ، اور 2,2گٹو لیکر آنا جب کہ گٹو کھولنے اور 2کلو تولنے میں 15منٹ لگانا معمول بن گیا ہے، چینی کا ٹھیکہ دار جس نے چینی کو بچانے کے لئے مختلف حربے استعمال کر رہا ہے کے خلاف شدید احتجاج کرتے ہوئے پوائنٹ پر آئے مختلف لوگوں غلام رسول، عبدالرشید، حلیمہ بی بی، بلقیس بی بی، عبدالجبار و دیگر نے بتایا کہ حکومت کی جانب چینی سٹال ان کے لئے زحمت بنا ہو اہے۔میلسی سے تحصیل رپورٹر کے مطابق رمضان بازاروں کی چینی کے کوٹہ میں کرپشن کا انکشاف، ذرائع کے مطابق کئی سالوں سے رمضان بازاروں کے نام پر متعلقہ سپلائرز سے ملی بھگت کر کے بیوروکریسی کے کی افراد لاکھوں روپے کا چونا لگا رہے ہیں۔ پہلے سے ہی تحصیل سطح پر 1لاکھ کلو سے زائد کا کوٹہ منظور کروایا جاتا ہے جبکہ رمضان بازاروں میں کم سٹال اور صارف کو 2کلو فی کس فراہمی کی پابندی لگا کر اس کی فروخت کی جاتی ہے۔ جس سے نہ صرف چینی بازار میں کم فروخت ہوپاتی ہے۔ یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ دوسری تحصیلوں کی طرح میلسی میں گزشتہ سال رمضان بازار میں ڈیڑھ لاکھ کلو چینی کا کوٹہ منظور کیا گیا مگر پورا رمضان ’’سستا رمضان بازار ‘‘ میں چالیس ہزار کلو چینی فروخت ہو سکی ۔ باقی کوٹہ سے متعلقہ سپلائرز مستفید ہوا۔ اس طرح اس بار بھی سستا رمضان بازار کو ایک لاکھ سترہ ہزار کلو چینی کا کوٹہ مقرر کیا گیا ہے۔ اور بازار میں سٹالوں کی تعداد بھی کم ہے انداز لگایا جا سکتا ہے کہ اس بار بھی حقیقت میں چینی کو مکمل کوٹہ فروخت ہونا ممکن نہیں لگ رہا۔ ذرائع کا کہنا ہے اس معاملے میں ضلعی اور تحصیل کی انتظامیہ مبینہ طور پر شامل ہوتی ہے۔تصدیق کے لئے حکام سے رابطہ نہ ہو سکا جبکہ متعلقہ محکمہ کے ترجمان نے اس خبر کو بے بنیا د قرار دیا ہے۔چوک میتلا سے نمائندہ پاکستان کے مطابق اے سی میلسی کا چوک میتلا میں ہوٹلوں پر چھاپے ماہ رمضان کا تقدس پامال کر نے والے ہوٹل مالکان کو جرمانے تفصیل کے مطابق اے سی میلسی سید شفقت رضا بخاری نے گزشتہ روز چوک میتلا میں رمضان المبارک کا تقدس پامال کر نے والے ہوٹلوں پر چھاپے مارے اور ہوٹل مالکان کو جرما نے کئے تونسوی پیر پٹھان کو 30ہزار روپے امین ہوٹل کو 10ہزار شیخ نواب ہوٹل ٹبہ سلطان پور عاصم چوک کو 20ہزار روپے جرمانے کئے فروٹ شاپ مال؛کان کو بھی زائد نرخ وصول کر نے پر جر مانے کئے۔بہاولپور سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق بہاولپورکے رمضان بازاروں میں لوٹ مارکاسلسلہ جاری ہے بازاروں میں اکثرسٹال خالی پڑے رہتے ہیں جبکہ جن سٹالوں پردکاندارجوسامان لگاتے ہیں اس کی وہ منہ مانگی قیمت لیتے ہیں نرخناموں کی طرف جب ان کی توجہ دلائی جائے تووہ کہتے ہیں کہ اس نرخ پرہم گلی سٹری اشیا توبیچ سکتے ہیں لیکن صاف ستھری اشیا اپنے نرخوں پرہی فروخت کرینگے رمضان بازاروں میں سبز مرچ، آلو، پیاز، پالک، اروی، بھنڈی، شملہ مرچ کے نرخ عام بازار کی نسبت 10 سے20 روپے کلوتک زیادہ وصول کئے جاتے ہیں رمضان بازار میں عام چنے کانرخ190 روپے فی کلووصول کیاجارہاہے جبکہ بازار میں موٹاچنا180 روپے کلومیں دستیاب ہے آم رمضان بازار میں150 روپے کلوجبکہ عام بازار85 سے100 روپے کلوروخت ہورہے ہیں آلو بخارہ کانرخ رمضان بازاروں میں20روپے فی کلوزیادہ وصول کیاجارہاہے خوبانی بازار سے30 روپے کلومہنگی ہے جبکہ عام سیب200 روپے کلوفروخت ہورہاہے ۔حاصل پور سے نامہ نگار کے مطابق رمضان بازاروں میں ناقص اشیاء کی فروخت مناسب ریٹ نہ ہونے پر عوام نے رمضان بازاروں کا رخ کرنا چھوڑ دیا ۔ مارکیٹ اور سبزی منڈیوں کے آڑھتیوں کی ملی بھگت سے ریٹ لسٹیں اویزاں کی جاتی ہے جس کی وجہ سے گراں فروشوں کے خلاف مقامی انتظامیہ اور ایئر کنڈیشنز کمروں میں پالیسیاں بنانے والے آفسران ناکام ہو چکے ہیں ۔ بازار میں غریب عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا جا رہا ہے ۔ جبکہ ٹی ایم اے عملہ اور افسران نیلی پیلی بتیاں لگا کر گاڑیوں پر سیر کر کے کاغذی کاروائی کر کے چلے جاتے ہیں ۔ ملک میں حکمرانوں کے پانامہ لیکس میں نام آنے سے صوبائی اور وفاقی ادارے بے قابو ہو چکے ہیں ۔ اداروں میں من مانے فیصلے ٹاؤٹوں کے ذریعے ناجائز کا م کیے جا رہے ہیں ۔ اس بد امنی کی فضان میں عوام میں بے چینی پائی جاتی ہے ان خیالات کا اظہار عوامی سماجی حلقوں کے علاوہ ملک محمد نعیم ایڈووکیٹ، حاجی افضل دھرالہ ایڈووکیٹ، محمد کیفی بلوچ ، چوہدری جمشید نعیم نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔چوک اعظم سے سٹی رپورٹر کے مطابق چوک اعظم کے رہائشیوں محمد سلیم،محمدنواز ،علی حیدر،نورخان،ولی دادخان اوردیگر نے میڈیا نمائندگان سے دوران گفتگو کہاکہ وزیر اعلی پنجاب کے سستارمضان بازاروں میں عوام کو ریلیف دینے کے سارے دعوے دھرے کے دھرے رہ گے ہیں کیونکہ چوک اعظم میں لگایا جانے والے سستا رمضان بازار مہنگا ترین بازار بن گیا ہے رمضان بازار سے اوپن مارکیٹ میں اشیاء خوردونوش اورفرٹ سبزیوں کے ریٹ سست ہیں سندھڑی آم رمضان بازار میں ایک سو پچاس روپے جبکہ اوپن مارکیٹ میں ایک سو روپے کلو فروخت ہو رہے ہیں یہاں تک کہ رمضان بازارمیں ایک فروٹ والاخوبانی180روپے کلو جبکہ اس کے سامنے والی سٹال پر وہی خوبانی160روپے فرخت کی جارہی ہے ۔دریں اثناء خفیہ اداروں کی کاروائی جعلی مرچ مصالحہ اوردیگر اشیاء فروخت کرنے والے دو افراد کو جعلی اشیاء سمیت گرفتار کر لیا،جعلی مرچ مصالحہ جات کے سیمپل لیبارٹری بجھوادیئے،زیر استعمال سوزوکی کیری ڈبہ اوررکشہ سامان سمیت تھانہ میں بند جعلی اشیاء کے سیمپل لیبارٹری کو بجھوادئے ہیں لیبارٹری رپورٹ کے بعد ن افراد کے خلاف کاروائی کی جائے گی ۔نواں کوٹ سے نمائندہ پاکستان کے مطابق رمضان المبارک کے شروع ہوتے ہی نواں کوٹ میں گراں فروشی عروج پر پہنچ گئی ہے گراں فروشوں نے سبزی ،پھل اور اشیاء خوردونوش کی قیمتوں میں چار گنا اضافہ کردیا ہے غریب کا چولہا بجھنے کاخدشہ ،مارکیٹ کمیٹی کے ارکان صرف بھتہ وصولی کی حد تک محدود ہوکر رہ گئے ہیں جبکہ لسٹ میں دئیے گئے شکایت سیل کے نمبرز بھی بوگس ہیں اسسٹنٹ کمشنر کی کاروائیاں صرف خان پور شہر کی حد تک سننے میں آرہی ہیں جبکہ چھوٹے شہروں کا اللہ ہی حافظ ہے۔صادق آباد سے تحصیل رپورٹر کے مطابق حکومت پنجاب کی ہدایت پر ہر تحصیل میں منافع خوروں کے خلاف ایکشن کے لئے پرائس کنٹرول ٹیمیں بنائی گئی ۔اس سلسلہ میں انچارج ٹیم چوہدری محمد جاوید رفیق نے چوہدری محمد صادق ہمراہ اپنی ٹیم سے کوٹ سبزل شہر میں خریداری کروائی ریٹ لسٹ سے زائد نرخ لینے پر قصائیوں طارق علی، محمد ارشد اور لیاقت علی کو نقد جرمانہ کیا جبکہ حسیب کریانہ سٹور اور سبزی فروشوں کو بھی جرمانے کئے گئے ۔ڈیرہ غازیخان سے بیورو رپورٹ،نمائندہ خصوصی کے مطابق اسسٹنٹ کمشنر صدر اصغر مجید بلوچ نے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کی ہدایت اور کمشنر محمد یثرب کے احکامات کی روشنی میں شہر بھر میں ناجائز منافع خوروں کے خلاف گرینڈ آپریشن جاری رکھا اور پولیس کی بھاری نفری کے ہمراہ مختلف مقامات پر چھاپے مار کر ناجائز منافع خوروں ،گرانفروشوں اور ذخیرہ اندوزوں کو 28ہزار روپے موقع پر جرمانہ کیا گیا جبکہ دو مقدمات احترام رمضان اور چار مقدمات پرائس کنٹرول ایکٹ کے تحت مقدمات کا اندراج کر ا کر 6افراد کو جیل بھیجا گیا ہے اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر اصغر مجید بلوچ نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ماہ صیام کے برکت بھرے مہینے میں کسی بھی روزہ داروں کو لوٹنے کی اجازت نہ دی جا ئے گی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر