عمر متین کے والد سیاسی ٹی وی شو کے میزبان، افغان صدارتی امیدوار بننے کی کوشش بھی کر چکے، پاکستان مخالف ہیں: میڈیا رپورٹس

عمر متین کے والد سیاسی ٹی وی شو کے میزبان، افغان صدارتی امیدوار بننے کی کوشش ...
عمر متین کے والد سیاسی ٹی وی شو کے میزبان، افغان صدارتی امیدوار بننے کی کوشش بھی کر چکے، پاکستان مخالف ہیں: میڈیا رپورٹس

  

اورلینڈو (ویب ڈیسک)میڈیا رپورٹس کے مطابق  امریکی شہر اورلینڈو میں ہم جنس پرستوں کے نائٹ کلب میں فائرنگ کرنے والے عمر متین کے والد صدیق متین نے ٹی وی شو کی میزبانی بھی کی ہے اور افغان صدارت کے امیدوار بننے کی کوشش بھی کر چکے ہیں۔ صدیق متین کا ”ڈیورنڈ جرگہ شو“ کیلیفورنیا سے نشر ہوا۔ صدیق متین مضبوط سیاسی رائے رکھتے ہیں اور افغان طالبان کی حمایت بھی کرتے رہے ہیں۔ انہوں نے کیلیفورنیا سے نشر ہونے والے ”پیام افغان“ چینل سے ڈیورنڈ جرگہ شو کی میزبانی کی۔ انہوں نے دری زبان میں کئی سیاسی مسائل پر گفتگو کی۔ یو ٹیوب پر ان کے نام سے درجنوں ویڈیو پوسٹ ہیں جن میں درج فون نمبر اور پوسٹل ایڈریس ان کے فلوریڈا کے گھر کا ہے۔ وہ ”ڈیورنڈ جرگہ“ کے نام سے ایک این جی او بھی چلاتے ہیں۔

نوائے وقت کے مطابق  ایک ویڈیو میں انہوں نے افغان طالبان کی حمایت اور پاکستان کی کھل کر مذمت کی ہے۔ انہوں نے کہا وزیرستان میں ہمارے بھائی‘ طالبان میں ہمارے جنگجو اور افغان طالبان کھڑے ہو رہے ہیں۔ انشاءاللہ ڈیورنڈ لائن کا مسئلہ جلد حل ہو جائے گا۔ ڈیورنڈ لائن پاکستان اور افغانستان کے درمیان سرحد ہے۔ ویڈیو سے معلوم نہیں ہوتا کہ صدیق متین پشتون ہیں یا نہیں۔ ان کی حالیہ ویڈیو افغان صدارتی الیکشن کے ایک سال بعد پوسٹ کی گئی ہے۔ صدیق متین نے نائٹ کلب میں فائرنگ کے واقعہ پر معافی مانگی ہے اور کہا ہے کہ پورے ملک کی طرح ہم بھی اس واقعہ پر گہرے صدمے میں ہیں۔

مزید : بین الاقوامی