سندھ ہائیکورٹ کی موتی محل گلشن اقبال میں سپرسٹورکھولنے کی اجازت

سندھ ہائیکورٹ کی موتی محل گلشن اقبال میں سپرسٹورکھولنے کی اجازت
سندھ ہائیکورٹ کی موتی محل گلشن اقبال میں سپرسٹورکھولنے کی اجازت

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) سندھ ہائیکورٹ نے موتی محل گلشن اقبال میں سپرسٹورکھولنے کی اجازت دے دی اور اپنے حکم میں کہا ہے کہ انتظامیہ ٹریفک کنٹرول کرے اور کاروبار بند نہ کرائے۔

گزشتہ دنوں ٹریفک کے مسائل کی وجہ سے موتی محل گلشن اقبال میں کھلنے والے سپر سٹور کھولنے پر انتظامیہ نے دن 3 بجے سے رات ساڑھے 9 بجے تک پابندی لگائی تھی جس کے خلاف سٹور انتظامیہ نے سندھ ہائیکورٹ سے رجوع کیا تھا۔ درخواست گزار نے سندھ ہائیکورٹ کے روبرو موقف اپنایا کہ سپر سٹور بند رکھنے کی وجہ سے کروڑوں روپے کا نقصان ہورہا ہے لہٰذا انتظامیہ کو پابندی ہٹانے کا حکم دیا جائے۔چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ ایس ایس پی ٹریفک سے مکالمہ کیا اور کہا کہ لوگ پارکنگ کرتے ہیں تویہ آپ کی ناکامی ہے آپ ٹریفک کنٹرول کریں کاروبار کیوں بند کرایا۔عدالت نے اپنے حکم میں سپر سٹور کھولنے کی اجازت دیتے ہوئے کہا کہ انتظامیہ لیاری ندی پر شہریوں کو پارکنگ کی اجازت نہ دے اور جو شہری پارکنگ کرے اس کی گاڑی اٹھائے یا ہوا نکال دے۔

مزید : کراچی /اہم خبریں