قطر میں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے والی خاتون کو ہی حراست میں لے لیا گیا

قطر میں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے والی خاتون کو ہی حراست میں لے لیا گیا
قطر میں جنسی زیادتی کا نشانہ بننے والی خاتون کو ہی حراست میں لے لیا گیا

  



دوحہ (مانیٹرنگ ڈیسک) متحدہ عرب امارات کی ریاست قطر میں نیدرلینڈ سے تعلق رکھنے والی ایک نوجوان خاتون نے پولیس کو درخواست دی تھی کہ اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا ہے تاہم پولیس نے خاتون کو زنا اور شراب نوشی کے الزامات کے تحت حراست میں لے لیا ہے ۔

برطانوی اخبار دی گارڈین  کے مطابق نیدرلینڈ سے تعلق رکھنے والی22 سالہ خاتون قطر کے دارالحکومت دوحہ میں چھٹیاں گزارنے آئی تھی تاہم یہاں آکر وہ ایک نئی مصیبت میں پھنس گئی اور پولیس نے اسے گرفتار کرلیا۔ ڈچ خاتون نے پولیس کو دی گئی ایک درخواست میں الزام عائد کیا کہ وہ دوحہ ہوٹل کے ایک کلب میں گئی جہاں اس نے شراب کا پہلا گھونٹ لیا ہی تھا کہ اسے فوری چکر آنا شروع ہو گئے اور اس کے بعد اسے کچھ یاد نہیں رہا کہ کیا ہوا تاہم جب اسے ہوش آیا تو خود کو ایک فلیٹ میں پایا۔ بعد ازاں اسے اندازہ ہوا کہ اس کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا گیا ہے۔ خاتون نے جس شخص پر جنسی زیادتی کا الزام لگایا اسے بھی حراست میں لے لیا گیا ہے لیکن اس شخص کا کہنا ہے کہ یہ زنا بالجبر نہیں بلکہ زنا بالرضا تھا۔ قطری میڈیا کے مطابق نیدر لینڈ کی نوجوان خاتون پر شراب نوشی کے متعلق جرائم کے الزامات بھی لگائے جا سکتے ہیں۔ خاتون کو آج عدالت کے روبرو پیش کیا جائے گا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس