پاکستانی ٹیکسی ڈرائیورنے بہادری کی نئی تاریخ رقم کردی، نوجوان لڑکی کو ڈاکوﺅں کے چنگل سے کیسے چھڑایا؟ جان کر ہر پاکستانی کی چھاتی فخر سے چوڑی ہوجائے گی

پاکستانی ٹیکسی ڈرائیورنے بہادری کی نئی تاریخ رقم کردی، نوجوان لڑکی کو ...
پاکستانی ٹیکسی ڈرائیورنے بہادری کی نئی تاریخ رقم کردی، نوجوان لڑکی کو ڈاکوﺅں کے چنگل سے کیسے چھڑایا؟ جان کر ہر پاکستانی کی چھاتی فخر سے چوڑی ہوجائے گی

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) ہم کریم جیسی ٹیکسی سروسز کے ڈرائیورز کی خواتین کو ہراساں کرنے کے متعلق خبریں تو پڑھتے رہتے ہیں لیکن اب کراچی کی ایک لڑکی نے ویب سائٹ ’پڑھ لو‘ پر اپنے ساتھ بیتنے والا ایک قصہ بیان کیا ہے جس میں کریم کے ایک ٹیکسی ڈرائیور نے کسی ہیرو کی طرح اسے ڈاکوﺅں کے چنگل سے نجات دلائی اور لٹنے سے بچایا۔ لڑکی لکھتی ہے کہ ”گزشتہ روز میں کریم ٹیکسی کے ذریعے ایس ایم سی ایچ ایس میں افطارپارٹی میں شرکت کے لیے جا رہی تھی۔راستے میں میں نے ڈرائیور کو اے ٹی ایم پر رکنے کو کہا کیونکہ مجھے رقم کی ضرورت تھی۔ ڈرائیور نے سندھی مسلم کی مرکزی روڈ پر واقع سٹینڈرڈ چارٹرڈ بینک پر گاڑی روک دی۔ میں اے ٹی ایم کے باہر جا کر کھڑی ہو گئی اور اس کے خالی ہونے کا انتظار کرنے لگی۔ اسی اثناءمیں وہاں دو ڈاکو آ گئے۔ اس سے پہلے کہ وہ مجھ تک پہنچتے، اے ٹی ایم کے اندر موجود شخص باہر نکل آیا اور میں نے جلدی سے اے ٹی ایم میں جا کر دروازہ بند کر لیا۔“

’نیلم انتہائی ذہین لڑکی تھی، ٹیوشن پر ایک نوجوان لڑکا پیچھے پڑگیا اور بالآخر دوستی ہوگئی، پھر اسی دوست نے اُسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا، گھبرا کر کچھ سمجھ میں نہ آیا تو ماں کو سارا واقعہ سنادیا، ماں نے فوراً۔۔۔‘ پھر اس کے ساتھ کیا ہوا اور اس کی کہانی کا انجام کیا ہوا؟

”اب میری ہمت نہیں ہو رہی تھی کہ میں اے ٹی ایم سے باہر نکل سکوں۔ پھر میں نے دروازے کے نیچے سے دیکھا تو میراڈرائیور بھی وہاں باہر آ کر میرا انتظار کر رہا تھا۔ وہ بہت معزز شخص تھا چنانچہ میں نے اسے دیکھ کر باہر آنے کا فیصلہ کیا۔ مجھے جتنی آیات یاد تھیں تمام پڑھنے کے بعد میں نے دروازہ کھولااور باہر نکل آئی۔ ڈرائیور میرے ساتھ بڑے بھائی کی طرح چلتا رہا حتیٰ کہ میں محفوظ گاڑی تک پہنچ گئی۔ ڈرائیور کو ساتھ دیکھ کر ڈاکووہاں سے فرار ہو گئے۔اگر ڈرائیور بہادری کا مظاہرہ کرکے وہاں ڈاکوﺅں کے پاس آ کر کھڑا نہ ہوتا تو میں کبھی بھی وہاں سے محفوظ نہ نکل سکتی تھی کیونکہ گاڑی بہت فاصلے پر کھڑی تھی۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس