ترقیاتی بجٹ کو سیاست کی نظر نہ کیا جائے، راجہ عامر اقبال

ترقیاتی بجٹ کو سیاست کی نظر نہ کیا جائے، راجہ عامر اقبال

راولپنڈی( کامرس ڈیسک)ترقیاتی بجٹ 2017 -18کے لیے اضافی رقم مختص کرنا خوش آئند ہے تاہم اسے سیاست کی نظر نہ کیا جائے انفراسٹرکچر کے ان منصوبوں کو ترجیح دی جائے جو قابل عمل اور اشد ضروری ہوں ایس ایم ای شعبے کو ترجیح دی جائے ٹیکسوں کے دائرہ کار میں اضافہ کیا جائے ریونیوٹارگٹ میں 14فی صد اضافہ پہلے سے موجود ٹیکس کنندگان پر بوجھ بنے گا گذشتہ چار سال میں ٹیکس کولیکشن میں بیس سے تیئس فی صد سالانہ اضافہ ہوا ہے لیکن فعال ٹیکس کنندگان کی تعداد میں خاطر خواہ اضافہ نہیں ہوا بلکہ کمی واقع ہوئی ہے ٹیکس ٹو جی ڈی پی کی بجائے ٹیکسو ں کا دائرہ کار بڑھایا جائے سیکشن 119چیپٹر 12 کے تحت ود ہولڈنگ ایجنٹ اگر کمپلائنس نہیں کرتا تو جرمانے کے ساتھ ساتھ اسے قید کی سزا بھی دی جا سکتی ہے ہمارا مطالبہ ہے کہ اسے واپس کیا جائے یہ غیر مناسب اقدام ہے اور ٹیکس کولیکشن کی روح کے منافی ہے ان خیالات کا اظہار راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے صدر راجہ عامر اقبال نے چیمبر میں پوسٹ بجٹ اجلاس سے خطا ب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ زراعت کے لیے ڈیزل انجن پر سیلز ٹیکس کی چھوٹ خوش آئند ہے زرعی مشینری پر چھوٹ سے زراعت کا شعبہ ترقی کرے گا راجہ عامر اقبال نے کہا کہ سی پیک کے تحت خصوصی اقتصادی زونز کے لیے رقم مختص کی جائے پاکستان میں حقیقی صنعتی ترقی کے بغیر بے روزگاری کا خاتمہ ممکن نہیں ہے انہوں نے کہا کہ فائلر اور نان فائلر کے درمیان ٹیکسوں کی شرح میں اضافہ اچھی بات ہے تاہم یہ مسلے کا مستقل حل نہیں ہے ۔

ٹیکس دہندہ بننے کے لیے دوسری مراعات اور ترغیبات بھی دی جائیں راجہ عامر اقبال نے کہا کہ کارپوریٹ ٹیکس میں کمی کو سرہاتے ہیں تاہم سپر ٹیکس جاری رکھنا ناقابل فہم ہے اس موقع پر سینئر نائب صدر راشد وائیں ، گروپ لیڈر ایس ایم نسیم، سابق صدر نجم ریحان، امان اللہ خان، انجمن تاجران کے نمائندوں چوہدری اقبال، نوید کنول، مجلس عاملہ کہ اراکین، ریونیو امور کمیٹی کے نائب چیئر مین شہزاد احمد ملک، اوردیگر چیمبر ممبران بھی موجود تھے

مزید : کامرس