ایرانی ایئر لائن اور امریکی کمپنی میں 30طیاروں کی خریداری کامعاہدہ

ایرانی ایئر لائن اور امریکی کمپنی میں 30طیاروں کی خریداری کامعاہدہ

تہران(اے این این) ایران کی نجی ایئر لائن آسیمان ایئر نے امریکا کی بوئنگ کمپنی سے 30 نئے طیاروں کی خریداری کے معاہدے پر دستخط کر دیئے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق طیاروں کی خریداری کے معاہدے پر آسیمان ایئر کے مینیجنگ ڈائریکٹر حسین اعلامی اور بوئنگ کمپنی کے ریجنل ڈائریکٹر جیمز مارفن نے تہران میں دستخط کئے ۔آسیمان ایئر اور بوئنگ کے درمیان طیاروں کی خریداری کے معاہدے کی لاگت 3 ارب ڈالر بتائی گئی ہے جس میں سے پانچ فی صد رقم نقد اور باقی کو فائنانس کی شکل میں ادا کیا جائے گا۔معاہدے کے تحت ہوائی جہازوں کی سپلائی 2022 سے شروع ہو جائے گی۔آسمان ایئر کے مینیجنگ ڈائریکٹر حسین اعلامی نے معاہدے پر دستخط کرنے کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ یہ معاہدہ 18 مارچ کو دونوں کمپنیوں کے درمیان طے پانے والے سمجھوتے کا حصہ ہے۔انہوں نے کہا کہ اس معاہدے کے تحت آسمان ایئر، پہلے مرحلے میں 30، سیون تھری سیون طیارے حاصل کرے گی جبکہ 30 دیگر طیاروں کی خریداری بھی ہمارے ایجنڈے میں شامل ہے۔رواں سال جنوری میں عالمی پابندیوں ختم ہونے کے بعد ایران نے طیارے بنانے والی یورپی کمپنی ایئربس سے پہلا مسافر طیارہ حاصل کیا تھا۔ایران نے 2015 میں جوہری پروگرام پر عالمی طاقتوں کے ساتھ ہونے والے جوہری معاہدے کے بعد ایئربس کو 189 نشستوں پر مشتمل 100 نئے اے 321 طیاروں کا آرڈر دیا تھا جنہیں وہ اپنی قومی فضائی کمپنی ایران ایئر میں استعمال کرے گا۔

ایرانی ایئر لائنز

مزید : علاقائی