’میں نے 1ہزار سے زائد خواتین سے تعلق قائم کیا اور ان سب نے مجھے۔۔۔‘ آدمی نے ایسی شرمناک ترین بات کہہ دی کہ جان کر کسی بھی مرد کو یقین نہ آئے

’میں نے 1ہزار سے زائد خواتین سے تعلق قائم کیا اور ان سب نے مجھے۔۔۔‘ آدمی نے ...
’میں نے 1ہزار سے زائد خواتین سے تعلق قائم کیا اور ان سب نے مجھے۔۔۔‘ آدمی نے ایسی شرمناک ترین بات کہہ دی کہ جان کر کسی بھی مرد کو یقین نہ آئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں جسم فروشی کرنے والے ایک ’مرد‘نے ایک ہزار سے زائد خواتین کے ساتھ تعلق قائم کرنے کے بعد ایسا شرمناک ترین انکشاف کیا ہے کہ سن کر کسی مرد کو یقین ہی نہ آئے۔ میل آن لائن کے مطابق سینی لو (Seani Love)نامی یہ شخص آسٹریلوی شہری اور پیشے کے اعتبار سے سافٹ ویئر انجینئر تھا۔ چند سال قبل یہ برطانیہ منتقل ہو گیا اور 2015ءسے اس نے اپنا سافٹ ویئر انجینئرنگ کا کام چھوڑ کر جسم فروشی کا دھندہ اپنا لیا۔ اس کا کہنا ہے کہ ”آج تک مجھے جتنی خواتین بھی ملی ہیںان کی عمریں 30اور 40کی دہائی میں تھیں۔ ان میں سے اکثر شادی شدہ تھیں تاہم وہ اپنی ازدواجی زندگی سے مطمئن نہ تھیں اور کچھ نیا چاہتی تھیں۔ کچھ ایسی اعلیٰ طبقے کی خواتین تھیں جو اپنے آپ کو کسی کے سامنے سرنڈر کرنے کی خواہش مند تھیں اور اپنے سرکل میں یہ کچھ نہیں کر سکتی تھیں۔ ان سب خواتین نے مجھے ایک رات گزارنے کے عوض1200پاﺅنڈ (تقریباً 1لاکھ 85ہزار روپے) ادا کیے۔“

سینی کا کہنا تھا کہ ”2015ءمیں میں نے لندن میں ایک جنسی ورکشاپ میں شرکت کی اور وہاں سے مجھے پتا چلا کہ مرد بھی جسم فروشی کرکے رقم کما سکتے ہیں۔ یہ جاننے کے بعد میں نے فیس بک اور دیگر سوشل میڈیا اکاﺅنٹس پر تشہیر کی اور جلد مجھے گاہک ملنی شروع ہو گئیں۔ اب میرے گاہکوں میں بہت امیر اور مشہور خواتین بھی شامل ہیں۔ ان میں سے ایک تو ایسی ہے جو اکثر ٹی وی پر آتی ہے۔میری موجودہ گرل فرینڈ میرے اس پیشے کے بارے میں جانتی ہے اور وہ اس سے بہت خوش ہے کیونکہ اسے معلوم ہے کہ میں اپنے اس پیشے کے ذریعے خواتین کو جنسی اعتبار سے بااختیار بنا رہا ہوں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس /برطانیہ