پاکستان پیپلز پارٹی کی سابق رہنما فہمیدہ مرزانے کتنے سو ملین روپے کے قرضے معاف کروائے ؟ ایسا انکشاف سامنے آ گیا کہ سن کر پاکستانی قوم کے پیروں تلے زمین نکل جائے گی

پاکستان پیپلز پارٹی کی سابق رہنما فہمیدہ مرزانے کتنے سو ملین روپے کے قرضے ...
پاکستان پیپلز پارٹی کی سابق رہنما فہمیدہ مرزانے کتنے سو ملین روپے کے قرضے معاف کروائے ؟ ایسا انکشاف سامنے آ گیا کہ سن کر پاکستانی قوم کے پیروں تلے زمین نکل جائے گی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )عام انتخابات 2018 کے حوالے سے سٹیٹ بینک ڈیفالٹر امیدواروں کی 217 افراد پر مشتمل فہرست الیکشن کمیشن کو بھجوا دی ہے جس میں پاکستان پیپلز پارٹی کی رہنما فہمیدہ مرزا کا نام بھی شامل ہے ۔

نجی ٹی وی دنیا نیوز نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیاہے کہ فہمیدہ مرزا بھی بینکوں کی نادہندہ نکلی ہیں اور ان کے ذمہ 276 ملین روپے واجب الادا ہیں جبکہ انہوں نے اپنی شوگر ملوں کے 504 ملین روپے کے قرضے معاف کروائے ہیں ۔ ان کے علاوہ فہرست میں غلام دستگیر لک کا نامب بھی شامل ہے اور انہوں نے 74 ملین سے زائد کے قرضے معاف کروائے ہیں ۔ امیدوار کنیز فاطمہ دو ملین اور نیلم ارشاد شیخ 46 ملین کی مقروض نکلیں ہیں ۔ نواز ش علی 10 ملین ، مختار احمد خان 307 ملین کے ڈیفالٹر نکلے ہیں جبکہ غلام مصطفی میرانی 2 ملین سے زائد کے نادہندہ ہیں ۔

مزید : قومی