تارکین وطن کی واپسی اوربہتر روزگار اولین ترجیح، زلفی بخاری

تارکین وطن کی واپسی اوربہتر روزگار اولین ترجیح، زلفی بخاری

  

اسلام آباد (آئی این پی) وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے سمندر پار پاکستانی زلفی بخاری نے کہا ہے کہ سمندر پار پاکستانیوں کی واپسی اور روزگار کی فراہمی حکومت کی اولین ترجیح ہے، بیرون ممالک میں بے روزگار ہونے والے ہم وطنوں کی مالی مدد کے لئے بھی انتظامات کئے جارہے ہیں،مشکل گھڑی میں قوم ایک ہے۔ جمعہ کے روز معاون خصوصی برائے سمندر پار پاکستانی زلفی بخاری کی زیر صدارت اجلاس ہوا۔ اجلاس میں چیئرپرسن احساس پروگرام ڈاکٹر ثانیہ نشتر، وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے قومی سلامی امور ڈاکٹر معید یوسف، معاون خصوصی برائے امور نوجوانان و ٹائیگر فورس عثمان ڈار سمیت اہم اداروں کے حکام نے شرکت کی۔ اجلاس میں سمندر پار پاکستانی ایمپلائمنٹ اینڈ اوورسیز پاکستانیز فاؤنڈیشن کے حکام بھی موجود تھے۔ اعلیٰ سطحی اجلاس میں بیرون ملک ہنر مندوں کو دوبارہ ورک فورس میں شامل کئے جانے کے پلان پر مشاورت کی گئی۔ کامیاب نوجوان پروگرام احساس پروگرام میں تکنیکی تربیتی اداروں سے معاونت لینے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ کرونا وباء کے باعث دو لاکھ پاکستانی مزدور ملازمتوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں معاون خصوصی برائے سمندر پار پاکستانی زلفی بخاری نے بتایا کہ وطن واپس آنے والے ہنر مند کارکنوں کو روگار فراہم کرنا ضروری ہے اور مہینوں سے بے روزگار اوورسیز پاکستانیوں کو مالی مدد پہنچانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تمام افراد کا مکمل ڈیٹا اکھا کیا جارہا ہے جبکہ مشکل حالات میں ہم وطنوں کی مشکلات کا مکمل احساس ہے۔ وزیراعظم عمران خان کی خواہش ہے کہ پاکستانی مزدوروں کو سہولتیں دی جائیں اور محفوظ وطن واپسی کے ساتھ روزگار کی فراہمی حکومت کی ترجیح ہے۔

زلفی بخاری

مزید :

صفحہ آخر -