نمونیہ،خانیوال میں تین بچے جاں بحق،انکوائری شروع

نمونیہ،خانیوال میں تین بچے جاں بحق،انکوائری شروع

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

خانیوال(نمائندہ خصوصی، نامہ نگار) مختلف بیماریوں میں مبتلا تین بچوں کو اعلاج معالجہ کے لئیے ضلعی ہسپتال خانیوال لایا گیا ہسپتال انتظامیہ کے مطابق بچوں کو نمونیہ کی شکائت تھی حالت غیر ہونے پر بچوں کو ہسپتل لایا گیا تو اموات ہوئی بچوں کی تعداد تین ہے دو بچوں (بقیہ نمبر25صفحہ7پر)

 کی عمر تقریبا چھ ماہ اور ایک کی دو سال بتائی جارہی ہے جبکہ بچوں کے والدین اور ہسپتال زرائع نے کنفرم کیا ہے کہ اینٹی بائیوٹک اینجیکشن لگانے سے اموات ہوئی ہیں اینجیکشن لگانے سے پہلے بچوں کی حالت غیر نہیں تھی اینجیکشن لگاتے ہی حالت غیر ہو گئی بچوں کی شناخت دعا فاطمہ،ایان اور رمضان کے نام سے ہوئی دوسری طرف واقع کی اطلاع ملتے ہی ڈپٹی کمشنر خانیوال،سی ای او ہیلتھ ہسپتال پہنچ گئے بچوں کے والدین سمیت ہسپتال عملے سے وقوعہ بارے معلومات حاصل کی ڈپٹی کمشنر خانیوال نے فوری نوٹس لیتے ہوئے انکوائری کمیٹی تشکیل دے کر رپورٹ طلب کر لی ہے بچوں کے والدین نے ایم ایس ڈی ایچ کیو اور زمہ دار ڈاکٹروں کی فوری معطلی کا مطالبہ کیا ہیڈپٹی کمشنر محمد علی بخاری نے ڈی ایچ کیو ہسپتال میں انجکشن سے 3 بچوں کے جاں بحق ہونے کا معاملہ کا نوٹس لیتے ہوئے انکوائری کمیٹی تشکیل دیدی -ڈپٹی کمشنر کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنر اور سی ای او ہیلتھ ڈی ایچ کیو ہسپتال پہنچ گئے-ترجمان ضلعی انتظامیہ کے مطابق جاں بحق بچوں میں 2 نمونیہ اور ایک سی پی چائلڈ کا شکار تھے-جاں بحق بچوں کو سنٹرل فارمیسی سے لائے گئے  Injection Ceftraxon لگائے جارہے تھے جن کے  لیبارٹری ٹیسٹ کلئیر تھے اور تمام بچوں کو  منظور شدہ انجکش  طے کردہ طریقہ کار کے مطابق ہی لگائے جارہے تھے-ترجمان کے مطابق دو بچے آج صبح  لائے گئے  تیسرا 10 تاریخ سے زیر علاج تھا- بچوں  میں ایک بچی کی  عمر6 ماہ,  دو بچوں کی عمریں ڈیڑھ سال اور دو  سال تھیں بچوں کو قبل ازیں بھی یہی انجکشن لگائے جارہے تھے- ترجمان نے مزید بتایا کہ انجکشن ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی نے اپنی تحویل میں لے لئے ہیں -بچوں کے جاں بحق ہونے پر ضلعی انتظامیہ والدین کے غم میں برابر شریک ہے۔