چھوٹا گدھا سمجھتا ہے وزن وہی کھینچ رہا ہے ،جسٹس جواد نے کہانی سنا دی

چھوٹا گدھا سمجھتا ہے وزن وہی کھینچ رہا ہے ،جسٹس جواد نے کہانی سنا دی
چھوٹا گدھا سمجھتا ہے وزن وہی کھینچ رہا ہے ،جسٹس جواد نے کہانی سنا دی

  


اسلام آباد ( ویب ڈیسک)جسٹس جواد ایس خواجہ نے حکومت سندھ کی طرف سے بکتر بند گاڑیوں کی خریداری کے لیے کئے گئے معاہدہ کے خلاف مقدمہ کی سماعت کے دوران گدھا ریڑھی کے ساتھ باندھے جانے والے ایک اضافی گدھے کی کہانی سنا دی۔تفصیلات کے مطاق جسٹس جواد ایس خواجہ نے ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل سندھ میران محمد شاہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ تو ایڈووکیٹ جنرل ہیں لیکن اس مقدمہ میں پیش ہونے والے عرفان قادر کون ہیں ہم آپکی عزت کرتے ہیں آپ ہماری عزت کرتے ہیں لیکن سیالکوٹ والے کہتے ہیں کہ جب گدھا گاڑی دیکھیں گے تو ایک گدھا تو گاڑی کھینچ رہا ہو تا ہے جبکہ دوسرا چھوٹا گدھا اس کے ساتھ یونہی باندھ دیا جاتا ہے لیکن چھوٹا گدھا اپنی دانست میں سمجھ رہا ہوتا ہے کہ اصل وزن وہی کھینچ رہا ہے لیکن ایسا نہیں ہوتا بعد میں جب گدھا بڑا ہو جاتا ہے تو اس کو بھی وزن کھینچنے پر لگا دیا جاتا ہے جسٹس جواد ایس خواجہ کا کہنا تھا کہ وہ (عرفان قادر) آج یہاں کھڑے نہیں ہیں ورنہ آج کام ہو جانا تھا قبل ازیں جسٹس اعجاز چوہدری کا کہنا تھا کہ انگریزوں کے دور میں کہا جاتا تھا کہ آپ کے ساتھ ABCلگی ہوئی ہے۔

مزید : اسلام آباد