سودکی گنجائش پیداکرنے والے ملک وملت کے خیرخواہ نہیں ، غلام رسول اُویسی

سودکی گنجائش پیداکرنے والے ملک وملت کے خیرخواہ نہیں ، غلام رسول اُویسی

  

لاہور( پ ر)مرکزی امیرتحریک اُویسیہ پاکستان ،پیرغلام رسول اُویسی،مرکزی سینئرنائب امیر،سیدعرفان احمدنے کہا ہے کہ علماء اسلام کے مالک نہیں خادم ہیں،اسلام اللہ تعالیٰ کادین ہے،اس میں اپنی طرف سے کچھ شامل نہیں کیاجاسکتا،کوئی علماء سے سودکی گنجائش پیداکرنے میں مددطلب کرتاہے توکوئی دہشت گردوں کے نظریات کے خاتمے کے لیے علماء سے مدد مانگتا ہے، اس بات میں کوئی شک نہیں کہ دہشتگردی کا خاتمہ اُولیاء اللہ اورعلماء کرام کے کردارکے بغیر ممکن نہیں،علماء حق اپنی اہمیت کوپہچانیں اورباطل کے ہاتھوں میں کھیلنابندکریں،حکمران سودکے حق میں فیصلہ چاہتے ہیں جبکہ علماء کی ذمہ داری دین حق کوجوں کاتوں پیش کرنا ہے،اسلام اللہ تعالیٰ کادین ہے اورعلماء وہی ہیں جودین و دنیاکے معاملات میں اللہ تعالیٰ سے ڈرتے ہیں،سودکی گنجائش پیداکرنے والے نہ توملک کے خیرخواہ ہیں اورنہ ہی عوام کے،علماء حکومت وقت کواس حقیقت سے آگاہ کریں گہ سودی نظام اللہ اوراللہ کے رسول ؐ کے ساتھ جنگ ہے اورکون ہے جواللہ،رسول اللہ ؐ کے ساتھ جنگ کی طاقت رکھتاہے ،جب تک ملک سے سود،ناانصافی،لاقانونیت ختم نہیں ہوتے دہشتگردوں کے نظریات کسی نہ کسی صورت میں باقی رہیں گے

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -