متحدہ عرب امارات میں مقیم پاکستانی نوجوان شیف کی نوکری چھوڑ کر ٹیکسی ڈرائیور بن گیا

متحدہ عرب امارات میں مقیم پاکستانی نوجوان شیف کی نوکری چھوڑ کر ٹیکسی ڈرائیور ...
متحدہ عرب امارات میں مقیم پاکستانی نوجوان شیف کی نوکری چھوڑ کر ٹیکسی ڈرائیور بن گیا

  

ابوظہبی (مانیٹرنگ ڈیسک)شوق اور مجبوری انسان سے کچھ بھی کرا سکتی ہے ، کچھ ایسا ہی واقعہ متحدہ عرب امارات میں مقیم پاکستانی نوجوان کے ساتھ پیش آیا جس نے شیف کی نوکری چھوڑ کر ٹیکسی چلانا شروع کر دی۔خلیج ٹائمز کے مطابق متحدہ عرب امارات میں 31سالہ پاکستانی نوجوان اور فائیو سٹار شیف ذوہیب عاشق مجبوراْْ ٹیکسی ڈرائیور بن گیا ،نوجوان اس سے قبل ابوظہبی کے 2فائیو سٹار ہوٹلز میں بطور شیف کام کر چکا ہے اور منٹوں کے اندر ہسپانوی کھانے تیار کر سکتا ہے۔پاکستانی نوجوان نے بیرون ملک اپنے ساتھ پیش آنے والے واقعات کو بیان کرتے ہوئے کہا کہ وہ ابوظہبی میں اطالوی ریسٹورنٹ پر بطور کومیز شیف ملازمت کر رہا تھا مگر غیر متوقع طورپر ہوٹل اچانک بند ہوگیا جس سے وہ بیروز گار ہو گیا۔ خوش قسمتی سے میرے پاس ڈرائیونگ لائسنس تھا اور میں نے ابوظہبی میں ٹیکسی ڈرائیور کی نوکری کیلئے اپلائی کر دیا اور دوران انٹرویو افسران یہ جانکر بہت خوش ہوئے کہ میں ایک شیف ہوں تاہم انہوں نے مجھے ٹیکسی ڈرائیور کی نوکری دیدی۔

مزید :

صفحہ آخر -