ملکہ سے ایوارڈ وصول کرنیوالی پہلی مسلمان خاتون کا میٹروپولیٹن پولیس کیخلاف مقدمہ

ملکہ سے ایوارڈ وصول کرنیوالی پہلی مسلمان خاتون کا میٹروپولیٹن پولیس کیخلاف ...
 ملکہ سے ایوارڈ وصول کرنیوالی پہلی مسلمان خاتون کا میٹروپولیٹن پولیس کیخلاف مقدمہ

  

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ کی ملکہ الزبیتھ دوم کے ہاتھوں اویارڈ وصول کرنے والی پہلی مسلمان خاتون جاسوس نے نسل پرستی کا نشانہ بنائے جانے پر میٹروپولیٹن پولیس کے خلاف مقدمہ دائر کر دیا ہے۔ کانسٹیبل نگہت ہوبارڈ نے یہ دعویٰ بھی کیا ہے کہ پولیس فورس میں کام کے دوران انہیں جنسی تعصب کا نشانہ بھی بنایا گیا۔نگہت نے الزام عائد کیا ہے کہ انہیں گندمی رنگت کے باعث اہم مقدمات پر کام کرنے سے پیچھے رکھا جاتا تھا جبکہ ان کے دیگر ساتھی ’’گورے‘‘ اہلکاروں کو کام کرنے کے زیادہ مواقع فراہم کئے جاتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ 2013ء اور 2014ء کے دوران مرد اہلکار ان کیلئے اور دیگر خواتین پولیس اہلکاروں کیلئے امتیازی جملوں کا استعمال کرتے تھے۔واضح رہے کہ نگہت ہوبارڈ کو سماجی خدمات کے اعتراف میں 2014ء میں ملکہ الزبتھ دوم کی جانب سے اعزاز بھی دیا گیا تھا

مزید :

صفحہ اول -