میانمار ، روہنگیا خاتون سے بد اخلاقی شکایت پر ظلم کے پہاڑ توڑ دیئے

میانمار ، روہنگیا خاتون سے بد اخلاقی شکایت پر ظلم کے پہاڑ توڑ دیئے
 میانمار ، روہنگیا خاتون سے بد اخلاقی شکایت پر ظلم کے پہاڑ توڑ دیئے

  

ینگون( نیٹ نیوز) میانمار میں روہنگیا مسلمانوں کی حالت زار کی داستانیں عام ہیں۔ایک 25سالہ خاتون کو اس وقت تشدد کا نشانہ بنایا گیا جب اس نے برمی سکیورٹی فورسز کی اس کے ساتھ کی جانے والی بد اخلاقی کی اس نے شکایت کی۔بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق جب گزشتہ سال اکتوبر میں میانمار کے فوجیوں نے ریاست راخائن میں جنگجوؤں کی تلاشی کا عمل شروع کیا تو روہنگیا اقلیت کو خاص طور پر بد ترین نشانہ بنایا گیا۔کئی گاؤں جلا دیئے گئے ،مردوں کو قتل کردیا گیا۔ خواتین سے بد اخلاقی کی گئی۔ جب 25سالہ جمالدہ بیگم نے اپنے ساتھ ہونے والی بد سلوکی کی شکایت کی تو اس پر ظلم کے پہاڑ تو ڑ دیئے گئے ۔میانمار کے حکام نے اس پر کئی الزامات عائد کرکے تشدد کا نشانہ بنایا، اس کی بے عزتی کی گئی۔اس نے بتایا کہ اس کے شوہر کو گولی مار دی گئی تھی۔ جمالدہ بیگم ا س وقت اپنے دو بچوں کے ساتھ رہ رہی ہے۔

مزید :

صفحہ اول -